سائلین کی داد رسی میں کسی قسم کی کاہلی برداشت نہیں کی جائیگی:سی سی پی او

سائلین کی داد رسی میں کسی قسم کی کاہلی برداشت نہیں کی جائیگی:سی سی پی او

  

 پشاور(کرائم رپورٹر) کپیٹل سٹی پولیس پشاور میں کارکردگی کی جانچ پڑتال کی خاطر خصوصی طریقہ کار وضع کیا گیا ہے جس کے تحت عمدہ کارکردگی کے حامل اہلکاروں کی حوصلہ افزائی جبکہ غفلت ولاپرواہی کا مظاہرہ کرنے والے اہلکاروں کو سزا دی جاتی ہے، پولیس جوان محنت کر کے اپنی پیشہ ورانہ صلاحیتوں میں نکھار پیدا کریں، تھانے آنے والے سائلین کی بروقت داد رسی کو ہر صورت یقینی بنانا ترجیحات میں شامل ہے جس میں کسی قسم کی کوتاہی برداشت نہیں کی جائے گی، ان خیالات کا اظہار گزشتہ روز سی سی پی او عباس احسن نے ملک سعد شہید پولیس لائن میں اعلی کارکردگی کا مظاہرہ کرنے والے افسران و جوانوں کو انعامات دینے کے دوران کیاتفصیلات کے مطابق گزشتہ روز ملک سعد شہید پولیس لائن پشاور میں سی سی پی او عباس احسن کی سربراہی میں تقسیم انعامات کا سادہ مگر پروقار تقریب کا انعقاد کیا گیا، اس موقع پر ایس ایس پی آپریشنز یاسر آفریدی، ایس ایس پی انوسٹی گیشن شہزادہ فاروق کوکب، ایس پی کینٹ زنیر احمد چیمہ، ایس پی رول سجاد حسین، ایس پی صدر سرکل وقار خان اور دیگر پولیس افسران بھی موجود تھے، اس موقع پر پیشہ ورانہ مہارت اور جرائم پیشہ افراد کے خلاف عمدہ کارکردگی کے حامل پولیس اہلکاروں کو نقد انعامات اور توصیفی اسناد سے نوازا گیاسی سی پی او عباس احسن نے افسران و جوانوں کی کارکردگی کو سراہتے ہوئے واضح کیا کہ اہلکاروں کی کارکردگی اور پیشہ ورانہ مہارت کو مانیٹر کیا جا رہا ہے، انہوں نے مزید کہا کہ اچھی کارکردگی کے حامل پولیس افسران و اہلکاروں کی حوصلہ افزائی کا سلسلہ اسی طرح جاری رہے گا، انہوں نے مزید کہا کہ پولیس جوان پیشہ ورانہ صلاحیتوں کا مظاہرہ کرتے ہوئے جرائم اور دیگر معاشرتی برائیوں کے خاتمے کے لئے کوششیں جاری رکھیں تاکہ پرسکوں اور پرامن معاشرے کا قیام یقینی بنایا جا سکے سی سی پی او عباس احسن نے قتل مقاتلے کی دشمنیوں کے خاتمے سمیت جائیدادی تنازعات، قبضہ مافیہ، اسلحہ کی نمائش کرنے والے افراد کے خلاف بھی خصوصی کریک ڈاون اور بلا تفریق کارروائی کی ہدایت کی ہے

مزید :

پشاورصفحہ آخر -