سارہ انعام قتل کیس میں اہم پیش رفت

سارہ انعام قتل کیس میں اہم پیش رفت
سارہ انعام قتل کیس میں اہم پیش رفت

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) شوہر کے ہاتھوں قتل ہونے والی سارہ انعام  کےکیس کی تفتیش میں پیش رفت ہوئی ہے۔

جیو نیوز  کے مطابق پولیس نے جائے وقوعہ سے 6 موبائل فون برآمد کر لیے جن میں سے 5 موبائل ملزم شاہنواز امیر اور ایک موبائل فون سارہ انعام کا ہے۔ ملزم نےایک اپنا اور سارہ کا موبائل فون آلہ قتل سے توڑ دیا تھا، ملزم نے مقتولہ سے رابطے کے لیے استعمال موبائل فون توڑ کر شواہد ضائع کرنےکی کوشش کی۔

 پولیس نے 6 موبائل فون فارنزک کیلئے لیبارٹری بھجوا دیے اور فونز کا ڈیٹاریکور کرکے دونوں کے درمیان جھگڑےکی وجہ معلوم کی جائے گی۔ ملزم نے مقتولہ کا کینیڈین پاسپورٹ بھی قینچی سے ٹکڑے کرکے ضائع کردیا تاہم مقتولہ کے پاسپورٹ کے کچھ ٹکڑے اور قینچی جائے وقوعہ سے ملی ہے۔

پولیس نے بتایا کہ سارہ کیلئے خریدی گئی گاڑی قبضے میں لے کر تھانے منتقل کر دی گئی۔ ملزم اپنے ایک موبائل فون سے والد سے رابطے میں رہا، پولیس کے پہنچنے سے پہلے ملزم نے کمرے میں موجود خون کپڑے سے صاف کیا اور  لاش کو باتھ ٹب میں ڈال کر خون دھونے کی کوشش کی۔پولیس کی ابتدائی تفیش کے مطابق سارہ کوڈمبل سےپہلےگلدان بھی ماراگیا۔

مزید :

قومی -