کرم ایجنسی کے قبائلیوں کے بلاک شناختی کارڈ ریلیز نہ کرنے پر توہین عدالت کا نوٹس جاری

کرم ایجنسی کے قبائلیوں کے بلاک شناختی کارڈ ریلیز نہ کرنے پر توہین عدالت کا ...

پشاور(نیوزرپورٹر)جسٹس یحیی آفریدی اور جسٹس روح الامین پرمشتمل دورکنی بنچ نے عدالتی احکامات کے باوجود کرم ایجنسی کے قبائلیوں کے بلاک شناختی کارڈ ریلیزنہ کرنے پر صوبائی سیکرٹری داخلہ کوتوہین عدالت کانوٹس جاری کردیاہے فاضل بنچ نے یہ احکامات گذشتہ روز درخواست گذاروں پینداخان اور حیات خان کی جانب سے دائرتوہین عدالت کی درخواست پر جاری کئے انہوں نے موقف اختیار کیاکہ درخواست گذاروں کاتعلق کرم ایجنسی کے علی زئی قبائل سے ہے اوران کے شناختی کارڈ 2001ء سے بلاک ہیں جبکہ اس حوالے سے محکمہ داخلہ بھی ان کے پاکستانی شہری ہونے کالیٹربھی جاری کرچکا ہے جبکہ24مارچ2015ء کو پشاورہائی کورٹ نے ان کی رٹ درخواستیں منظورکرکے کمپیوٹرائزڈشناختی کارڈ جاری کرنے کاحکم دیاتھالیکن اس واضح احکامات کے باوجود بھی شناختی کارڈ تاحال جاری نہیں ہوئے جو کہ توہین عدالت کے زمرے میں آتاہے لہذامتعلقہ حکام کے خلاف توہین عدالت کی کارروائی عمل میں لائی جائے فاضل بنچ نے صوبائی سیکرٹری داخلہ کونوٹس جاری کرکے وضاحت طلب کرلی ۔

مزید : پشاورصفحہ اول

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...