امریکہ میں ٹیلی میڈیسن،مریضوں اور ڈاکٹروں کا انٹرنیٹ کے ذریعے رابطہ

  امریکہ میں ٹیلی میڈیسن،مریضوں اور ڈاکٹروں کا انٹرنیٹ کے ذریعے رابطہ

  

کیلی فورنیا (این این آئی)امریکہ میں کرونا وائرس کا زور مارچ کے وسط سے شروع ہوا اور اس سے بچنے کی سب سے موثر احتیاط یہ تھی کہ ایک دوسرے سے ممکن حد تک دور رہا جائے؛ یعنی وائرس کی پہنچ سے بہت دور۔ اس پابندی کے بعد لوگوں نے متبادل طریقے تلاش کرنے شروع کر دیے۔ ایسے حالات میں وہ مریض کیا کرتے جنہیں کرونا نہیں مگر معالج سے مشورہ اور تشخیص کی ضرورت پڑتی ہے۔امریکہ میں فون یا ای میل کے ذریعے رابطہ پہلے بھی ہوا کرتا تھا۔ مگر، آٹے میں نمک کے برابر، تقریباً ایک فی صد۔ مگر اب یہ تناسب بہت بڑھ گیا ہے۔ ایک نئے مطالعے کے مطابق، تیس فی صد مریض ٹیلی وزٹ کے ذریعے ڈاکٹر سے رجوع کرتے ہیں۔ وہ ویڈیو کے ذریعے مریض کا معائنہ کرتے ہیں اور دوا تجویز کرتے ہیں۔میڈیارپورٹس کے مطابق ہارورڈ یونی ورسٹی کے ریسرچ سکالرز نے کہاکہ یہ ایک ڈرامائی تبدیلی ہے۔ بہرحال اب ٹیلی میڈیسن کے بغیر گذارا ممکن نہیں۔ کلنک میں جانا خطرے سے خالی نہیں۔

طبی ماہرین

مزید :

علاقائی -