چینی سکینڈل،وفاقی کابینہ کل تحقیقاتی کمیشن کو مزید مہلت دینے کا فیصلہ کریگی، شہزاد اکبر

چینی سکینڈل،وفاقی کابینہ کل تحقیقاتی کمیشن کو مزید مہلت دینے کا فیصلہ ...

  

اسلام آباد (سٹاف رپورٹر، مانیٹرنگ ڈیسک، نیوز ایجنسیاں)وزیراعظم عمران خان کے معاون خصوصی برائے احتساب و امور داخلہ شہزاد اکبر نے کہا ہے کہ چینی کمیشن کی درخواست پر وفاقی کابینہ (کل)منگل کو غور کرے گی۔ایک بیان میں شہزاد اکبر نے کہا کہ چینی پر بنائے گئے تحقیقاتی کمیشن کی فورنزک رپورٹ 25 اپریل کو آنا تھی۔انہوں نے کہا کہ کمیشن نے رپورٹ جمع کرانے کے لیے حکومت سے 3 ہفتوں کی توسیع کی درخواست کی ہے جس پر وفاقی کابینہ آئندہ اجلاس میں غور کرے گی۔یاد رہے کہ چینی کمیشن کے چیئرمین اور ڈائریکٹر جنرل فیڈرل انویسٹی گیشن ایجنسی واجد ضیا نے جمعہ کو حکومت سے رابطہ کرکے باضابطہ طور پر درخواست کی تھی کہ کمیشن کو کام تکمیل کیلئے 3 اضافی ہفتوں کا وقت دیا جائے۔کمیشن نے درخواست میں کہا تھا کہ مبینہ طور پر نہ صرف کورونا وائرس کی وجہ سے تاخیر ہورہی ہے بلکہ عدم تعاون جیسے مسائل بھی درپیش ہیں۔درخواست میں کہا گیا کہ کچھ معاملات ایسے بھی ہیں کہ کمیشن کو درکار معلومات تاخیر سے حاصل ہوئیں جبکہ کچھ معاملات میں مطلوبہ معلومات کا تاحال انتظار ہے۔وفاقی کابینہ، شوگر فرانزک کمیشن (ایس ایف سی) کی جانب سے گزشتہ برس ہونے والے چینی بحران سے متعلق رپورٹ مرتب کرنے کیلئے مزید 3 ہفتے کی مہلت کی درخواست کا فیصلہ (کل)28 اپریل کو کرے گی۔وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت وفاقی کابینہ کا اجلاس (کل) منگل28اپریل کو ہوگا جس میں ملک کوروناوائرس کی صورتحال پر بریفنگ دی جائیگی۔۔کابینہ کو ملک کوروناوائرس کی صورتحال پر بریفنگ دی جائے گی جبکہ وفاقی کابینہ پارکو کے بورڈ آف ڈائریکٹرزکی تشکیل نو، کوروناسے متاثرہ صحافیوں کیلئے گرانٹ اور مالی معاہدوں کی نیٹنگ کے بل2020 کی منظوری دے گی۔کریڈٹ بیوروایکٹ 2015 کے سیکشن 11 کے تحت نوٹیفکیشن، سوئی ناردرن،پی پی ایل کے بورڈ، پی ایم ڈی سی اور او جی ڈی سی ایل بورڈز کی آسامیوں پرنامزدگیوں کی منظوری ایجنڈے میں شامل ہیں۔وفاقی کابینہ واپڈا کے ممبر فنانس کی تعیناتی کی بھی منظوری دے گی اور ای سی سی اجلاس کے فیصلوں کی توثیق کرے گی۔

تحقیقاتی کمیشن

مزید :

صفحہ اول -