مافیا کا ایکا،لاک ڈاؤن کا نقصان رمضان المبارک میں پورا کرنیکا منصوبہ

مافیا کا ایکا،لاک ڈاؤن کا نقصان رمضان المبارک میں پورا کرنیکا منصوبہ

  

رحیم یار خان‘ جتوئی‘ وہاڑی (بیور و رپورٹ‘ نامہ نگار‘ سٹی رپورٹر) رمضان المبارک کا آغاز ہوتے ہی ناجائز منافع خوروں اور ذخیرہ اندوزوں نے کھجوروں، لیموں،آلو، مرغی، سیب کی قیمتوں کو پر لگ گے،کھجور 300 روپے سے لے کر 600 روپے فی کلو بکنے لگی جبکہ سرکاری ریٹ لسٹ میں 140 روپے سے 280 روپے فی کلو ہیاسی طرح لیموں کی قیمت جو رمضان المبارک سے پہلے 120 روپے فی کلو تھی وہ لیموں اب400روپے فی کلو میں فروخت ہو رہا ہے جبکہ سرکاری ریٹ لسٹ میں 280 روپے فی کلو گرام ہے اس طرح آلو جو رمضان سے پہلے 40 روپے فی کلو گرام تھا اب 70/80 روپے فی کلو بکنے لگا ہے جب کہ سرکاری ریٹ لسٹ میں 55روپے فی کلو گرام ہے، سیب،180روپے سے لے کر 200 روپے فی کلو تک پہنچ گیا ہے اسی طرح دیگر فروٹ کی قیمتوں میں بھی اضافہ ہوگیا ہے، ناجائز منفع خور عوام کو دونوں ہاتھوں سے لوٹ رہے ہیں اور مصنوعی مہنگائی پیدا کر رہے ہیں اس موقع پر متحدہ مجلس عمل تحصیل رحیم یارخان کے صدر و جے یو آئی کے سئنیر نائب امیر طیب سعید لغاری نے کہا کہ رمضان المبارک کا مہینہ جیسے ہی شروع ہوا ہے تو فروٹ، کھجور، لیموں و دیگر سبزیوں کی قیمتوں میں اضافہ کی وجہ سے عوام کی قوت خرید ختم ہو کر رہے گی ہے، پرائس کنٹرول کمیٹیاں مہنگائی پرقابو نہیں پاسکیں اورناجائز منافع خوروں نے اپنی مرضی کے ریٹ مقرر کر دئیے ہیں جس سے عوام کی چیخیں نکل آئیں ہیں. کرونا وائرس کے باعث کاروبار زندگی ختم ہونے سے بے روزگاری، سٹرٹ کرائم، چوری اور ڈکیتی کی وادتوں میں اضافہ ہوگیا ہے، انہوں نے ضلعی انتظامیہ سے مطالبہ کیا کہ ناجائز منافع خوروں اور ذخیرہ اندوزوں کے خلاف ایک بھرپور مہم چلائی جاے اور تمام اشیاے خوردونوش فروٹ، سبزیوں،کھجور اور لیموں کی قیمتوں میں ہسنے والے اضافہ کو روکا جاے اور غریب عوام کے لیے آسانیاں پیدا کی جائیں اور تاجروں کو کاروبار کرنے کی اجازت دی جائے۔ ماہ صیام شروع ہوتے ہی شہر میں اشیاء خوردونوش کے ریٹ آسمانوں سے باتیں کرنے لگ گئے شہری محمد قاسم محمد مظہر محمد ظفر محمد اقبال محمد حفیظ اللہ عبدالرشید محمد تنویر محمد خالد محمد ساجد ودیگر نے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ لاک ڈاون کی وجہ سے گھر بیٹھے ہے اور غریب عوام کی پہنچ سے دور ہو گئیں انہوں نے کہا کہ ناجائز منافع خوروں نے خودرونوش کے خود ساختہ ریٹ مقرر کرلیے ہے شہریوں نے وزیراعلی پنجاب کمشنر ڈیرہ غازی خان ڈپٹی کمشنر مظفرگڑھ نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے ادھر ڈپٹی کمشنر کیپٹن (ر) وقاص رشید نے اشیائخوردونوش کی قیمتوں کا ازسرنو تعین کردیاہے جس کے مطابق آٹا 20کلو گرام کا تھیلا805روپے میں، سپر کرنل باسمتی نیا127، پکی سپر باسمتی چاول پرانی 127، چاول اری 60، دال چنا باریک127، دال چنا موٹی 135، دال مسور موٹی درآمد شدہ 140، دال مسور لوکل باریک 160، دال ماش دھلی درآمد شدہ 228، دال مونگ دھلی 280، چنا سیاہ باریک لوکل 110، چنا سیاہ موٹا لوکل 102، چنا سفید موٹا لوکل 110، چنا سفید باریک لوکل 90، مسور ثابت 128، سوجی 54، میدہ54، بیسن 137روپے فی کلوگرام، دودھ فی لیٹر 70روپے، دہی فی کلو75روپے، گوشت چھوٹا 680روپے، گوشت بڑا380روپے فی کلوگرام، روٹی تندوری 6روپے، نان سادہ 7روپے، نان روغنی 10روپے مقرر کیا گیا ہے ڈپٹی کمشنر کیپٹن (ر) وقاص رشید نے حکم نامہ جاری کیا ہے کہ کوئی بھی شخص یا دکاندار مقرر کر دہ نرخ سے زائد وصول نہیں کرے گا اور نہ ہی زائد وصولی کیلئے اقدامات کرے گا اور نہ مقرر کر دہ نرخوں پر فروخت سے انکار کرے گا تمام دکاندار نرخ نامے کو نمایاں جگہ پر آویزاں کریں گے ڈپٹی کمشنر نے مزید کہا کہ پرائس کنٹرول مجسٹریٹس باقاعدگی سے اشیائخوردونوش کی مقرر کردہ قیمتوں کو چیک کریں گے اور جو دکاندار بھی خلاف ورزی کا مرتکب پا یا گیا اس کے خلاف سخت کاروائی عمل میں لائی جائے گی۔

منصوبہ

مزید :

ملتان صفحہ آخر -