ڈیزل کی مصنوعی قلت پیدا کرنے والوں کا محاسبہ کیا جائے،رشید منہالہ

  ڈیزل کی مصنوعی قلت پیدا کرنے والوں کا محاسبہ کیا جائے،رشید منہالہ

  

لاہور (پ ر) کسان بورڈ وسطی پنجاب کے صدر میاں رشید منہالہ نے کہ ہے کہ حکومت ڈیزل کی مصنوعی قلت پیدا کرنے والے ذخیرہ اندوزوں کو نشان عبرت بنائے،گندم کی فصل پک چکی ہے اور کٹائی کا موسم عروج پر ہے۔جبکہ دیہی علاقوں میں ڈیزل مل نہیں رہا اور جہاں مل رہا ہے بلیک میں فروخت کیا جارہاہے۔ڈیزل کی قیمت میں 51روپے تک اضافہ کی خبروں نے لالچی اور بے ضمیر لوگوں میں حوس کو بڑھا دیاہے یہ لوگ راتوں رات اربو ں پتی بننے کے سپنے دیکھنے لگ گئے ہیں۔اگر حکومت نے ذخیرہ اندوز مافیا کے خلاف سخت کارروائی نہ کی تو کسان بورڈ پاکستا ن پورے پنجاب میں احتجاج کی کال دے گا۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے گزشتہ روز پورے پنجاب کے عہدیداران سے ڈیزل کی دستیابی کے حوالے سے ٹیلی فونک رابطے کے بعد میڈیا کو جاری بیان میں کیا۔

 میاں رشید منہالہ کا کہنا تھا کہ میاں شہباز شریف کی حکومت سے عوام اور کسانوں کو بڑی امیدیں وابسطہ تھیں کہ یہ ریلیف دیں گے لیکن اس حکومت نے بھی آئی ایم ایف کے پاؤں پکڑ لئے ہیں اور بجلی، گیس اور پٹرولیم مصنوعات پر سبسڈی ختم کرنے کی یقین دہانی کروا دی ہے۔ جس کی وجہ سے ملک میں بے یقینی کیفیت او ر عوام میں مایوسی کی لہر دوڑگئی ہے۔بجلی، گیس اور پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں ظالمانہ اضافہ سے مہنگائی کا نہ تھمنے والا طوفان آئے گا۔سبزیوں، دالوں اور گندم سمیت تمام زرعی اجناس کی پیداواری لا گت میں اضافے سے عام آدمی دو  وقت کی روٹی سے بھی محروم ہو جائے گا۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -