ڈیرہ،قریشی موڑ فیڈر پر بجلی کی ناروالوڈشیڈنگ،درابند12گھنٹوں پر محیط

 ڈیرہ،قریشی موڑ فیڈر پر بجلی کی ناروالوڈشیڈنگ،درابند12گھنٹوں پر محیط

  

    ڈیر ہ اسماعیل خان(بیورورپورٹ)واپڈا پیسکو کی قریشی موڑ فیڈر پر ظالمانہ لوڈ شیڈنگ، 12گھنٹے شیڈولڈ لوڈ شیڈنگ کے علاوہ اڈے کاٹنے اور ٹرپنگ کے باعث لوڈشیڈنگ کا دورانیہ 20گھنٹے تک جاپہنچا، انڈسٹریل ایریا ہونے اور مختلف فیکٹریوں کی جانب سے کروڑوں روپے کی ریکوری کے باوجود واپڈا پیسکو نے عوام، تاجروں اور فیکٹری مالکان کی چیخیں نکلوادیں، تجارتی و عوامی حلقوں کا قریشی موڑ فیڈر پر ظالمانہ لوڈ شیڈنگ،اڈے کاٹنے اور ٹرپنگ کے خاتمے کا مطالبہ۔ تفصیلات کے مطابق واپڈا پیسکو کی کی جانب سے ڈیرہ اسماعیل خان میں شیڈول کی لوڈ شیڈنگ کے ساتھ ساتھ فورس لوڈ شیڈنگ اور اڈے کاٹنے کے ساتھ بجلی کی بار بار ٹرپنگ سے شہری علاقے محفوظ ہیں نہ ہسپتال، 18سے 20گھنٹے کی ظالمانہ لوڈ شیڈنگ سے جہاں عوام تاجر پریشان ہیں وہیں واپڈا پیسکو کی قریشی موڑ فیڈر پر ظالمانہ لوڈ شیڈنگ، 12گھنٹے شیڈول لوڈ شیڈنگ کے علاوہ اڈے کاٹنے اور ٹرپنگ کے باعث لوڈشیڈنگ کا دورانیہ 20گھنٹے تک جاپہنچا ہے جس کے باعث انڈسٹریل ایریا ہونے کے باعث فیکٹری مالکان پریشان جبکہ مزدور ہاتھ پر ہاتھ دھرے بیٹھے ہیں، انڈسٹری ایریا سے کروڑوں روپے کی ریکوری کے باوجود واپڈا پیسکو نے عوام، تاجروں اور فیکٹری مالکان کی چیخیں نکلوادیں ہیں۔ فلور ملز، گھی اور دیگر انڈسٹریز کو بجلی کی فراہمی نہ ہونے سے جہاں بیرزگاری کا خطرہ ہے وہیں پروڈکشن نہ ہونے سے ان اشیا کے بحران کا بھی اندیشہ ہے۔ قریشی موڑ فیڈر سے منسلک عوامی و تجارتی حلقوں نے ضلعی انتظامیہ اور حکومت سے ظالمانہ لوڈ شیڈنگ، اڈے کاٹنے اور ٹرپننگ کے مسائل کا فوری نوٹس لیکر ان کے حل کا مطالبہ کیا ہے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -