اشتہاریوں کیخلاف آپریشن شروع کرنیکا حتمی فیصلہ

اشتہاریوں کیخلاف آپریشن شروع کرنیکا حتمی فیصلہ

  

ملتان(وقائع نگار)ملتان پولیس کی عدم توجہی کے باعث مجرمان اشتہاری پولیس کی گرفت سے آزاد چلے آرہے ہیں۔جس پر ضلعی پولیس نے برہمی کا اظہار کیا ہے۔جبکہ پولیس افسران نے ضلع بھر کے 748 اشتہاری مجرمان کے نام وہیکلز کو قرقی کا فیصلہ کیا ہے۔حکم عدولی کی صورت میں سخت محکمانہ کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔ذرائع کے مطابق ضلع ملتان میں (بقیہ نمبر2صفحہ6پر)

پولیس کی ناقص حکمت عملی کی وجہ سے زیادہ تر اشتہاری ملزمان پولیس کی گرفت سے آزاد چلے آرہے ہیں۔جو موقع پاکر بار بار قانون شکنی کر رہے ہیں۔اشتہاری ملزمان کی گرفتاری کو یقینی بنانے کیلئے ملتان پولیس نے اہم فیصلہ کیا ہے۔جس میں انہوں نے سب سے اشتہاریوں کی جائیدادوں کو قرقی کرنے کیلئے اقدام کیئے اس کے بعد پولیس نے 748 ایسے اشتہاریوں کے ناموں کی لسٹ مرتب کی ہے۔جن کا ایکسائز سے ریکارڈ چیک کیا جارہا ہے۔اگر ان اشتہاریوں کے ناموں پر کسی بھی قسم کی وہیکلز کا ریکارڈ موجود ہوگا۔تو فورا اسکی وہیکلز کی قرقی کا اقدام کرنے کے تحرک کیا جائے گا۔اس حوالے سے ضلعی پولیس افسران نے ایک مراسلہ جاری کیا ہے۔جس میں انہوں نے ہدایت دی ہے کہ صدر ڈویثرن کے 106۔گل گشت کے 272۔سٹی ڈویثرن 81 جبکہ کینٹ ڈویثرن کے 289 اشتہاری ہیں۔متعلقہ ایس ایچ اوز کو ناموں کی لسٹ فراہم کردی گئی ہے جس کی روشنی میں قانونی کارروائی عمل میں لائی جائے گی دوسری جانب ضلعی پولیس افسران نے اشتہاریوں ی گرفتاری نا ہونے پر ضلع بھر کے ایس ایچ اوز کی کارکردگی ہر برہمی کا اظہار کیا ہے۔حکم عدولی کی بصورت میں سخت محکمانہ کاروائی عمل میں لانے عندیہ دے دیا ہے۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -