تائیوان ہمارا اتحادی ، چین مداخلت بند کرے : امریکہ

تائیوان ہمارا اتحادی ، چین مداخلت بند کرے : امریکہ

  

واشنگٹن(آئی این پی) امریکہ نے چین کو وارننگ دی ہے کہ اس کے اتحادی تائیوان کے معاملے میں سیاسی مداخلت نہ کریں۔وائٹ ہاؤس کی پریس سیکرٹری سارہ سینڈرز نے کہاہے کہ امریکہ ایلسلواڈور کے ساتھ تعلقات پر دوبارہ غور کرسکتا ہے۔کیونکہ اس نے بیجنگ کے حق میں تائیوان سے تعلقات ختم کردیے۔اس لیے امریکہ خطے میں نئے سفارتی تعلقات قائم کرنے کی چینی کوششوں کی مزاحمت کرے گا۔السلواڈور حکومت کے چین کے ساتھ تعلقات مغربی ہی مسفیئر ملک کی داخلی سیاست میں مداخلت امریکہ کے لیے باعث تشویش ہے۔جس کے نتیجے میں وہ السلواڈور کے ساتھ تعلقات پر دوبارہ غور کرسکتا ہے۔انہوں نے کہا کہ امریکہ خلیج کے اس پار مغربی ہی مسفیئرمیں تعلقات اور سیاسی مداخلت کی مخالفت جاری رکھے گا تاہم انہوں نے کسی خصوصی اقدام کی طرف اشارہ نہیں کیا۔چین اور امریکہ کی تجارتی جنگ کے بعد دونوں میں یہ ایک نیا تنازع شروع ہوگیا ہے۔ السلواڈور تیسرا سینٹرل امریکی ملک ہے جس نے بیجنگ کو تسلیم کیا ہے اور تائیوان سے تعلقات ختم کرلیے ہیں اس وقت تائیوان کے صرف سترہ سفارتی اتحادی موجود ہیں۔یاد رہے تائیوان کے صدارتی آفسنے گزشتہ روز امریکہ کی طرف سے چین کو وارننگ دینے پر امریکہ کا شکریہ ادا کیا تھا۔

مزید :

عالمی منظر -