جماعت اسلامی کے کارکن خو د احتسابی کا عمل زندہ کریں،حافظ ادریس

جماعت اسلامی کے کارکن خو د احتسابی کا عمل زندہ کریں،حافظ ادریس

لاہور(سٹی رپورٹر)نائب امیر جماعت اسلامی پاکستان حافظ محمد ادریس نے جماعت اسلامی کے یوم تاسیس کے موقع پر کہاہے کہ جماعت اسلامی کے ہر ذمہ داران اور کارکنان کو خود احتسابی کے عمل کو زندہ کرناچاہیے ،بلاشبہ جماعت اسلامی کی ایک سنہری تاریخ اور شاندار ریکارڈ ہے مگر زندہ تحریکیں خارجی جدوجہد کے ساتھ داخلی احتساب نہ کریں تو بے جان ہوجاتی ہیں ۔ انہوں نے اپنے بیان میں کہا کہ جماعت اسلامی اسمبلیوں میں کبھی بڑی تعداد میں نہیں رہی مگر اس کی کاوشوں اور سید مودودی کی انقلابی راہ نمائی میں اس ملک کا اسلامی دستور اسی کمزور جماعت نے بنوایا ، قرار داد مقاصد اور 31 علما کے22 نکات وہ بنیادی مسودہ ہے جس نے پاکستان کے دستور میں طے کرادیا کہ حاکمیت اعلیٰ اللہ تعالیٰ کی ہے اور ملک میں کوئی قانون قرآن و سنت کے خلاف نہیں بن سکتا ۔ یہ دستور اس ملک کو سیکولر سٹیٹ بنانے کی مذموم کوششوں کے راستے میں سد سکندری ہے ۔ انہوں نے کہاکہ ہمیں آج اپنے پورے جماعتی ڈھانچے کا آڈٹ کر کے نئے عزم کے ساتھ میدان میں اترناہے اور ہر چیلنج کا مردانہ وار مقابلہ کرنا ہے ۔ میدان چھوڑ کر بھاگ جانے والے کبھی کارنامہ سر انجام نہیں دے سکتے ۔ ہمیں قرآن و سنت کی دعوت کے ذریعے اپنی منزل کی جانب بڑھنا ہے ۔

جماعت اسلامی کے دستور کا بھی یہی تقاضا ہے اور مدینہ کی اسلامی ریاست کا بھی یہ تصور ہے ۔

مزید : میٹروپولیٹن 4


loading...