جوہری پلانٹ کی تعمیر کے لیے ایران اور روس مذاکرات کا آغاز

جوہری پلانٹ کی تعمیر کے لیے ایران اور روس مذاکرات کا آغاز

  

تہران/ماسکو(آئی این پی ) ایران میں جوہری منصوبوں کی تعمیر کے لیے روس اور تہران کے درمیان نئے مذکرات کا آغاز ہو گیا، 3ہزار سے زائد میگاواٹ بجلی پیدا کی جاسکے گیجبکہ روس کا ایک جوہری ریکٹر پہلے سے ایران میں کام کررہا ہے۔تفصیلات کے مطابق ایران کے وزیر توانائی نے کہا ہے کہ نئے جوہری پلانٹ کی تعمیر کے لیے ایران اور روس کے درمیان مذاکرات کا آغاز ہوگیا ہے جس کے بعد 3 ہزار سے زائد میگاواٹ بجلی پیدا کی جاسکے گی۔ ایران تاحال جوہری توانائی کے ذریعے ایک ہزار میگا واٹ بجلی پیدا کرنے کی صلاحیت رکھتا ہے۔غیر ملکی میڈیا کے مطابق روس کی جانب سے پہلے ہی ایک جوہری پلانٹ کام کررہا ہے۔خیال رہے کہ ایران اور روس کے درمیان 2014 میں جوہری پلانٹ لگانے کا معاہدہ طے ہوا تھا جس کے تحت 8 سے زائد پلانٹ تعمیر کیے جائیں گے۔دوسری جانب امریکا نے سنہ 2015 میں طے ہونے والے جوہری معاہدے کو منسوخ کرتے ہوئے مزید اقتصادیاں پابندیاں عائد کردی ہیں۔

مزید :

علاقائی -