خیبر پختونخوا اسمبلی میں کئی خواتین کروڑوں روپے اثاثوں کی مالک

خیبر پختونخوا اسمبلی میں کئی خواتین کروڑوں روپے اثاثوں کی مالک

  

پشاور(مانیٹرنگ ڈیسک) خیبرپختونخوا اسمبلی میں کئی خواتین اراکین کروڑ پتی ہیں جبکہ تحریک انصاف کی رکن ملیحہ علی اصغر سرفہرست ہیں ۔ الیکشن کمیشن آف پاکستان میں اراکین کے جمع کردہ دستاویزات کے مطابق کے پی کے اسمبلی کی کئی خواتین کروڑوں روپے کے اثاثوں کی مالک ہیں۔دستاویزات کے مطابق تحریک انصاف کی رکن ملیحہ علی اصغر خان کا تعلق ضلع مانسہرہ سے ہے اور انہوں نے اپنی دستاویزات میں 93 کروڑ روپے کے اثاثے ظاہر کیے ہیں۔ ملیحہ علی اصغر کی تعلیم گریجوئیشن ہے اور وہ اب تک تھائی لینڈ، لندن اور سری لنکا کا دورہ کر چکی ہیں اور وہ خواتین اراکین اسمبلی میں سب سے زیادہ اثاثوں کیساتھ سرفہرست ہیں۔تحریک انصاف کی رکن اسمبلی عائشہ بانو بھی 5 کروڑ رو پے کے اثاثوں کی مالک ہیں اور شعبہ قانون سے وابستہ ہیں، انہوں نے 2002 ء میں ایل ایل بی کی ڈگری حاصل کی،دستاویزات کے مطابق پیپلز پارٹی کی رکن نگہت اورکزئی کے اثاثوں میں 280 تولے سونا شامل ہے جبکہ عوامی نیشنل پارٹی کی رکن ایم پی اے شگفتہ ملک کے پاس45 لاکھ روپے کے اثاثے ہیں اور ان کے پاس پولیٹیکل سائنس میں ماسٹر کی ڈگری ہے۔تحریک انصاف کی رکن خیبرپختونخوا اسمبلی آسیہ صالح خٹک کے پاس کوئی اثاثہ نہیں اور وہ شعبہ قانون سے وابستہ ہیں۔

کروڑ پتی خواتین

مزید :

کراچی صفحہ اول -