سی پیک کے حوالے سے زمین کی ملکیت صرف پاکستانیوں کی ہے:چینی سفیر

سی پیک کے حوالے سے زمین کی ملکیت صرف پاکستانیوں کی ہے:چینی سفیر

  

 اسلام آ باد (سٹاف رپورٹر) چینی سفیریاوجنگ نے کہا ہے کہ ایم ایل ون کیلئے کافی بڑی سرمایہ کاری چاہئے، چینی صدرکادورہ منصوبوں کے افتتاح سے نہیں جڑاہوا،پاکستان کی ہرحکومت کیساتھ خوش ہیں،سی پیک کے حوالے سے زمین کی ملکیت صرف پاکستانیوں کی ہے، اسپیشل اکنامک زونزمیں زمین لمبے عرصے کیلئے لیزپرملے گی،  پاکستان اورچین کی حکومتیں کورونا  ویکسین کی تقسیم کے حوالے سے تعاون کریں گی،فائبرآپٹک منصوبے میں ہمارااشتراک ایس سی او سے ہے،چین کسی قسم کی بھی پرتشدد کارروائیوں کی حمایت نہیں کرتا،افغانستان میں کچھ بین الاقوامی دہشتگردتنظیمیں کام کررہی ہیں،اور وہاں کی صورتحال کافی پیچیدہ ہے،کشمیر سے متعلق مختلف ممالک اپنی پوزیشنز لے رہے ہیں، امریکا کے چین پر الزامات بے بنیاد ہیں، امریکا کورونا سے متعلق اپنی ناکامی کا ملبہ چین پر ڈالنا چاہتا ہے۔ نجی ٹی وی کو انٹریو میں چینی سفیریاجنگ نے کہا ہے کہ بین الاقوامی کمیونٹی کیلئے کورونا ایک چیلنج ہے، چین نے سال کے شروع میں ہی ویکسین کیلئے تیاری شروع کردی تھی۔ انہوں نے کہا کہ موجودہ حکومت میں سی پیک میں تیزی آئی، سی پیک کے حوالے سے زمین کی ملکیت صرف پاکستانیوں کی ہے، سی پیک سے بلوچستان کو سب سے زیادہ فائدہ ہوگا۔تاہم چین افغانستان میں امن واستحکام دیکھناچاہتا ہے۔

چینی سفیر یاوجنگ

مزید :

صفحہ اول -