غیر قانونی طور پر ریلوے لائنوں کو عبور کرنے والوں کیخلاف کارروائیاں 

  غیر قانونی طور پر ریلوے لائنوں کو عبور کرنے والوں کیخلاف کارروائیاں 

  

لاہور(لیڈی رپورٹر)محکمہ ریلوے کی جانب سے غیر قانونی طور پر ریلوے لائنوں کو عبور کرنے والے افراد کے خلاف سخت کارروائی کی جارہی ہے۔اسی تناظر میں بذریعہ موٹر سائیکل غیر قانونی طور پرریلوے لائنوں کو عبور کرنے والے03افرا د کے خلاف تھانہ ریلوے پولیس راولپنڈی میں مقدمات کاا ندراج کر لیا گیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق ملزمان مسمیان راجہ یاسر، محمد ندیم اور سلطان احمد ریلوے یارڈ نزد ریلوے اسٹیشن مارگلہ راولپنڈی ڈویژن بوقت آمد ٹرین گرین لائن (06DN)  غیر قانونی طور پر بذریعہ موٹر سائیکل ریلوے لائنوں کو کراس کر رہے تھے جن کے خلاف قانونی کارروائی کرتے ہوئے دفعات 122(1),123,129RAکے تحت تھانہ ریلوے پولیس راولپنڈی میں مقدمات کا اندراج کر کے باقاعدہ گرفتار کر لیا گیا ہے ریلوے کراسنگ پر غفلت برتنے کے نتیجے میں ہونے والے حادثات اور قیمتی انسانی جانوں کے ضیائع کے پیش نظر انسپکٹر جنرل پاکستان ریلوے پولیس عارف نواز خان کی جانب سے ریلوے پولیس کی تما م ڈویژنوں کے ایس پیز کو باقاعدہ تحریری احکامات بھی جاری کئے گئے تھے کہ ریلوے قوانین کی خلاف ورزی خصوصی طور پر ٹریس پاسنگ کرنے والے افراد کے خلاف موثر کارروائی کی جائے اوراس سلسلے میں عوام الناس کے شعور میں اضافے کے لئے باقاعدہ آگاہی مہم بھی چلائی جائے۔ گزشتہ دو ماہ کے دوران ملک بھر میں اب تک بذریعہ کار، موٹر سائیکل، ٹریکٹر ٹرالی و دیگر سواریوں ٹریس پاسنگ کرنے والے281افراد کے خلاف مقدمات کا اندراج کیا گیا ہے۔ ریلوے پولیس پشاور ڈویژن میں 60، راولپنڈی ڈویژن میں 72، لاہور ڈویژن میں 75، ملتان ڈویژن میں 38، سکھر ڈویژن میں 18 اور کراچی ڈویژن میں 18مقدمات کا اندراج کیا گیا ہے۔ جبکہ عوامی شعور میں اضافے کے لئے  ریلوے اسٹیشنوں اور دیگر ریلوے تنصیبات پر پینا فلیکسزاور بینرز بھی لگائے گئے ہیں اور اس کے علاوہ سوشل میڈیا پر ویڈیو پیغام بھی جاری کیا گیا ہے۔ 

ریلوے لائنیں 

مزید :

صفحہ آخر -