پسند کی شادی کرنے والی لڑکی کو اسکے بھائی زبردستی ساتھ لے گئے

پسند کی شادی کرنے والی لڑکی کو اسکے بھائی زبردستی ساتھ لے گئے

  

لاہور(نامہ نگارخصوصی)پسند کی شادی کرنے والی لڑکی کو اسکے بھائی لاہورہائی کورٹ سے زبردستی اپنے ساتھ لے گئے،اس موقع پر لڑکی شور مچاتی رہی لیکن بھائیوں سے چھڑوانے کے لئے خاوند نے بھی کوئی مزاحمت نہیں کی،اس موقع پر لڑکی اپنے خاوند کے ساتھ جانے کے لئے واویلا کرتی رہی،اوکاڑہ کی زینب نے گھر والوں کی مرضی کے خلاف الطاف سے شادی کی،لڑکی کے بھائی یاسین نے الطاف کے خلاف اغوا کا مقدمہ درج کروادیا،ااخراج مقدمہ کے لیے الطاف نے لاہور ہائیکورٹ سے رجوع کیا تھااوراس کیس کی پیروی کے لئے دونوں میاں بیوی عدالت میں پیش ہوئے،عدالت نے درخوست پر اوکاڑہ پولیس کو نوٹس جاری کئے،سماعت کے بعد زینب اور اس کا شوہر الطاف عدالت سے باہر نکلے تو وہاں موجود لڑکی کے بھائی زینب کو زبردستی اپنے ساتھ لے گئے۔

ساتھ لے گئے

مزید :

صفحہ آخر -