نیب کے ذریعہ سیاسی قیادت کی پگڑیاں اچھالی گئیں،جمشید مہمند

نیب کے ذریعہ سیاسی قیادت کی پگڑیاں اچھالی گئیں،جمشید مہمند

  

شیرگڑھ (نامہ نگار) ممبر صوبائی اسمبلی جمشید خان مہمند نے کہا ہے کہ نیب کے ادارے کے ذریعے سے ملک کی سیاسی قیادت کی پگڑیاں اچھال دی گئیں مگر پھر بھی نیب کا ادارہ کسی بھی سیاسی جماعت کے ایک ادنی لیڈر سے ایک بھی پائی وصول نہ کرسکا اسی بنیاد پر نیب متنازعہ ادارہ بن گیا ہے اب نیب کے قوانین میں بڑے پیمانے پر اصلاحات کی ضرورت ہے  پی ٹی آئی کی حکومت ملک وقوم پر گہری سازش کے نتیجے میں مسلط کی گئی ہے جس میں میڈیا کا بھی بہت اہم رول رہا ہے  پی ٹی آئی کی حکومت آپنے انتخابی وعدوں میں سے ایک بھی نہ نبھا سکی شیرگڑھ پریس کلب کی صحافت کی دنیا میں اپنا ایک تاریخی کردار کردار ہے انہوں ان خیالات کا اظہار بائیزئی پریس کلب شیرگڑھ کے نومنتخب کابینہ سے حلف لینے کی تقریب سے خطاب کے دوران کیا انہوں نے پریس کلب کے نومنتخب کے صدر بخت اللہ جان حسرت نائب صدر مسلم خان جنرل سیکرٹری ڈاکٹر شیر بھادر جائنٹ سیکرٹری عالمگیر خان نیازی اور فنانس سیکرٹری افسرعلی خان سے حلف لیا تقریب کی صدارت ممتاز سماجی وسیاسی کارکن سیف اللہ خان خٹک آف ہاتھیان نے کی تقریب کا باقاعدہ آغاز ممتاز عالم دین مولانا عبداللہ جان کی تلاوت کلام پاک سے ہوا پریس کلب کے صدر اور تقریب کی صدر نے بھی تقریب سے خطاب کیا اس تقریب میں علاقہ بھر کی سیاسی وسماجی شخصیات وکلا تاجر برادری کے نمائندوں تحصیل بھر کی صحافی برادری پریس کلب کے ممتاز اراکین عبدالرشید خان مہمند جمیل الرحمن شاہین خائستہ الرحمن سمیت پریس کے نئے ممبران سعیدالحق اجمل خان اکرام اللہ شاہین نے بھی شرکت کی ایم پی اے جمشید خان نے مزید کہا کہ پی ٹی آئی سرکار نے زیادہ تر وقت اپوزیشن کو دیوار سے لگانے میں گزارا پی ٹی آئی حکومت مسلسل ناکامیاں سمیٹ رہی ہیں عوام مسائل سے دوچار ہیں مگر پی ٹی آئی سرکار کو عوام مسائل سننے کیلئے  مخالفین کی کردار کشی سے بھی فرصت نہیں مل رہی ہے انہوں نے کہا کہ پی ٹی آئی کی حکومت جمہوریت دشمن قوتوں نے اپنے مزموم عزائم کو حاصل کرنے کیلئے گہری سازش کے تحت ملک وقوم پر مسلط کی ہے اس مقصد کیلئے ایک منظم سازش کے تحت میڈیا اور خصوصی طور پر سوشل میڈیا کا بھر پور استعمال کیا گیا ہے انہوں نے کہا کہ کرپشن کے سدباب کے نام پر پی ٹی آئی کی گزشتہ دوسالہ دوران حکومت میں نیب کا ادارہ صرف اور صرف اپوزیشن کی کردا کشی کیلئے استعمال کیا گیا ہے اب وقت آگیا ہے کہ اس ادارے کی اصلاح کیا جاسکے انہوں نے کہا شیرگڑھ پریس کلب کا صحافت کی دنیا میں اپنا ایک منفرد نام اور کردار ہے اور رہا ہے یہاں کے صحافیوں کی یہ زمہ داری بنتی ہے کہ وہ پریس کلب کی ان تاریخی روایات کا لاج رکھ 

مزید :

پشاورصفحہ آخر -