تنظیم مشائخ عظام کے زیراہتمام شہدائے کربلا کانفرنس

تنظیم مشائخ عظام کے زیراہتمام شہدائے کربلا کانفرنس

  

لاہورر (نمائندہ خصوصی)سید نا امام حسینؓ شریعت اور طریقت کے امام ہیں۔آپؓ کے فضائل و مناقب اور سیرت و کردارتاریخ کا روشن و درخشاں باب ہیں، ان خیالات اظہار تنظیم مشائخ عظام پاکستان کے امیر قائدروحانی انقلاب صوفی مسعوداحمد صدیقی المعروف لاثانی سرکار نے لاثانی انقلاب فورم کے زیر اہتمام مرکزی سیکرٹریٹ پر منعقدہ ”شہدائے کربلا کانفرنس“کے شرکاء  سے صدارتی خطاب کرتے ہوئے کیا۔

 انہوں نے کہابارگاہ رسالت میں سیدنا حسنین کریمین کی عظمت و محبوبیت کا یہ عالم ہے کہ اکثر خاتم البنیین حضور نبی کریم  آپ دونوں کے لئے دعائیں مانگتے اور لوگوں کو آپ کے ساتھ محبت رکھنے کی تاکید فرماتے۔ آپ نے فرمایاحسن اور حسین، یہ میرے بیٹے، میری بیٹی کے بیٹے ہیں، اے اللہ! میں ان سے محبت رکھتا ہوں تو بھی انہیں اپنا محبوب بنا اور جو ان سے محبت کرے تو بھی ان سے محبت فرما۔کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے صاحبزادہ پیر شبیراحمد صدیقی کا کہنا تھاکہ امام الشہدا ء  سرکار سیدنا امام حسین  جدبہ ایمانی سے سرشارہوکر یزید کے باطل اقدامات کے خلاف آہنی دیوار ثابت ہوئے اور برائی کے سدِّباب کے لئے آپ نے ہر ممکن کوشش کی، سرکارسیدنامام حسین نے تمام خطرات کے باوجود عزیمت کی راہ اختیار کی، کیونکہ ایک طرف ذاتی خطرات تو دوسری طرف نانا کا دین اور امت محمدی کا مفاد، لہٰذا آپ نے نہ صرف اپنی ذات اقدس بلکہ اپنے پورے گلشن کو اسلام کی سربلندی اور امت کے وسیع تر مفاد پر قربان کردیا۔ کانفرنس سے پیر الطاف حسین نقشبندی، پیر احسان الحق معصومی، پیر رفاقت علی نقشبندی، پیر محمد جنید نقشبندی، پیر لیاقت علی نقشبندی سمیت علماء  و مشائخ نے سرکارسیدنا امام حسین  کو زبردست خراج عقیدت پیش کیا۔ اختتام پر بارگاہ خاتم النبیین صلی اللہ علیہ وسلم میں درودوسلام کے نذرانے اور ملکی سلامتی کیلئے خصوصی دعائیں بھی مانگی گئیں۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -