کراچی میں بارشوں سے تباہی پر سیاست افسوسناک ہے،جاوید قصوری

    کراچی میں بارشوں سے تباہی پر سیاست افسوسناک ہے،جاوید قصوری

  

لاہور (نمائندہ خصوصی)امیرجماعت اسلامی صوبہ وسطی پنجاب و صدر ملی یکجہتی کونسل پنجاب وسطی محمد جاوید قصوری نے کہا ہے کہ کراچی میں بارشوں سے تباہی پر صوبائی اور وفاقی حکومت مشکل کی اس گھڑی میں بھی سیاست میں مصروف ہیں۔ لوگ بے یارو مدد گار کھلے آسمان کے نیچے زندگی گزار رہے ہیں۔ ان کا کوئی پرسان حال نہیں۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے گذشتہ روزمنصورہ میں اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔

 انہوں نے کہا کہ ہر سال مون سون آتا ہے اور ہر دفعہ ہی حکومت بلند و بانگ دعوے کرتی ہے مگر المیہ یہ ہے کہ ہر مرتبہ انفراسٹرکچر کو بہتر کرنے کی بجائے محض زبانی کلامی اقدامات سے کام چلایا جاتا ہے۔ اس کا نتیجہ سیلاب اور تباہی کی صورت میں نکلتا ہے۔ محکمہ موسمیات کی واننگ کے باوجود کراچی کی ضلعی انتظامیہ صوبائی حکومت اور وفاق نے کوئی خاطر خواہ اقدام نہ کیے اور آج بارشوں سے ہونے والے نقصانات اور تباہی کا سارا ملبہ ایک دوسرے پر ڈال کر بری الذمہ ہونا چاہتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ جماعت اسلامی کے کارکناں اور الخدمت کے رضا کار مشکل کی اس گھڑی میں کراچی کے لوگوں کو تنہا نہیں چھوڑیں گے۔ کراچی میں بارشوں کا نوے سالہ ریکارڈ ٹوٹ ہوچکا ہے۔ کراچی پاکستان کا سب سے بڑا شہر اور اتنے ہی بڑے مسائل کاشکا ر بھی ہے، شہر قائد کے حالات پر چپ انتہائی مجرمانہ خاموشی کے متراد ف ہوگا۔   محمد جاوید قصوری نے اس حوالے سے مزید کہا کہ حکمران مسلسل این آر او کی بات کررہے ہیں۔ قوم کو بتایا جائے کہ کون این آر او مانگ رہا ہے۔ اداروں کے خلاف محاذ آرائی ملک کو عدم استحکام کی طرف لے جائے گی۔ حکمران ہوش کے ناخن لیں۔ ملک و قوم مسائل کی دلدل میں دھنستے چلے جارہے ہیں اور عوام کا بر ا حال ہے۔مگر حکمرانوں کے کانوں پر جوں تک نہیں رینگتی۔ 

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -