ٹبہ سلطان پور: بوگس بلوں کا معاملہ انکوائری رپورٹ فائنل ڈاکٹر‘ کلرک  ٹھیکیدار کے خلاف ایکشن کی سفارش

   ٹبہ سلطان پور: بوگس بلوں کا معاملہ انکوائری رپورٹ فائنل ڈاکٹر‘ کلرک ...

  

 ٹبہ سلطان پور(نمائندہ پاکستان)  ہسپتال ٹبہ سلطان پور میں بوگس بل بنا کر قومی خزانہ سے رقم نکلوانے کے معاملے پر تحقیقاتی کمیٹی کی جانب سے انکوائری رپورٹ جاری کر(بقیہ نمبر44صفحہ 7پر)

دی گئی، لیڈی ڈاکٹر،سنیئر کلرک اور ٹھیکیدار کے خلاف کاروائی کرنے کی سفارش کی گئی ڈاکٹر سے ہسپتال کا چارج فوری طور پر لیکر سنیئر ڈاکٹر کو دینے کی بھی سفارش کی گئی لیڈی ڈاکٹر کی مزید ٹرینگ کروانے کی بھی نشاندہی کی گئی تفصیل کے مطا بق ہسپتال ٹبہ سلطان پور میں بوگس بل بنا کر قومی خزانہ سے رقم نکلوانے کے معاملہ کی تحقیقات کرنے والی کمیٹی نے اپنی رپورٹ تیار کر کے محکمہ کو ارسال کردی ہے تحقیقاتی کمیٹی کی جانب سے انکوائری رپورٹ میں ہسپتال کی انچارج کی جانب سے اختیارات کا ناجائز استعمال کرتے ہوئے کرپشن کر نا ثابت ہوا ہے ڈاکٹر نے سرکاری ہسپتال میں ائیر کینڈیشنر کی خریداری پر پابندی کے باوجود ایئر کینڈینشر خرید گئے ادویات اور دیگر سامان کی مدد بھی کرپشن ثابت پائی گئی ہے جس پر تحقیقاتی کمیٹی نے محکمہ صحت کو ڈاکٹر، ہسپتال کے سنیئر کلرک اور ٹھیکیدار کے خلاف کاروائی کر نے بھی سفار ش کی گئی ہے تحقیقاتی کمیٹی نے اپنی رپورٹ میں لکھا ہے کی ہسپتال ٹبہ سلطان پور کاچارج ڈاکٹر سے فوری طور پرلیکر کسی دوسرے سنیئر ڈاکٹر کو دے دیا جائے اور ڈاکٹر کی مزید ٹرینگ بھی کروائی جائے واضع رہے کہ روزنامہ پاکستان مسلسل بوگس بل معاملہ کی کوریج کرتا چلا آرہا ہے تحقیقاتی کمیٹی کی جانب سے ڈاکٹر کے حق میں رپورٹ جاری کرنے بھی نشاندہی کی گئی جس کے بعد تحقیقاتی کمیٹی نے بدنامی سے بچنے کے لئے10اگست کو رپورٹ جاری نہیں کی گئی اور سوچ بچار کے بعد گذشتہ روز انکوائری رپورٹ تیار کر کے محکمہ سے کاروائی کی سفارش کی گئی ہے واضع رہے کہ تحقیقاتی کمیٹی کے چیئرمین ڈاکٹر خالد محمود کا ممکنہ ترقی ہونے والے افسران کی فہرست میں نام شامل ہے۔ 

سفارش

مزید :

ملتان صفحہ آخر -