افغان طالبان سے ملاقات کیسی رہی اور کن اہم امور پر گفتگو ہوئی؟وزیر خارجہ شاہ محمودقریشی نے ساری بات کھول دی

افغان طالبان سے ملاقات کیسی رہی اور کن اہم امور پر گفتگو ہوئی؟وزیر خارجہ شاہ ...
افغان طالبان سے ملاقات کیسی رہی اور کن اہم امور پر گفتگو ہوئی؟وزیر خارجہ شاہ محمودقریشی نے ساری بات کھول دی

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا ہے کہ  افغان طالبان نمائندہ وفد کے ساتھ ملاقات سود مند رہی ،اگر امن طاقت سے آتا تو 41سال کا عرصہ کم نہیں تھا۔

نجی ٹی وی کے مطابق وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا ہےکہ افغان طالبان نمائندہ وفد کے ساتھ ملاقات سود مند رہی اور طالبان وفد کے ساتھ گفتگو دوحہ میں امن معاہدے پر عملدرآمد سے متعلق ہوئی، افغانستان مسئلے کا حل مذاکرات کے ذریعے ہی ممکن ہے کیونکہ اگر امن طاقت سے آتا تو 41سال کا عرصہ کم نہیں تھا۔انہوں نے کہا کہ افغان وفد نے دوحہ امن معاہدے پر عملدرآمد میں درپیش مشکلات سے آگاہ کیا ہے جبکہ لویہ جرگہ کا انعقاد بھی مثبت پیش رفت ہے۔شاہ محمود قریشی نے کہا کہ وزیر اعظم نے عبداللہ عبداللہ سے ٹیلیفونک رابطہ کیا اور انہیں دورہ پاکستان کی دعوت بھی دی،پاکستان کی کوشش ہے کہ انٹرا افغان مذاکرات کو جلد آگے بڑھایا جائے۔

مزید :

قومی -