آدمی کو 3 ماہ تک پیٹ کے نیچے شدید خارش کی شکایت، بالآخر معائنہ کروایا تو ایسی چیز کہ دیکھ کر ڈاکٹر بھی دم بخود رہ گئے

آدمی کو 3 ماہ تک پیٹ کے نیچے شدید خارش کی شکایت، بالآخر معائنہ کروایا تو ایسی ...
آدمی کو 3 ماہ تک پیٹ کے نیچے شدید خارش کی شکایت، بالآخر معائنہ کروایا تو ایسی چیز کہ دیکھ کر ڈاکٹر بھی دم بخود رہ گئے

  


پیرس(مانیٹرنگ ڈیسک) پیرس میں ایک آدمی کو 3ماہ سے پیٹ کے نچلے حصے میں شدید خارش ہو رہی تھی۔ بالآخر تنگ آ کر وہ ایک دن ڈاکٹر کے پاس چلا گیا۔ جب ڈاکٹر نے معائنہ کیا تو ایک ایسی چیز وہاں موجود تھی کہ جس کی ڈاکٹر بھی توقع نہیں کر رہا تھا۔ ڈاکٹروں نے پیٹ پر موجود بالوں میں سیاہ دھبے دیکھے۔ جب ڈاکٹر نے ڈرموسکوپ سے ان کا معائنہ کیا تو حیران کن انکشاف ہوا کہ وہ دھبے دراصل انسان کا خون چوسنے والی جوئیں تھیں۔ انہیں زیر ناف جوئیں (Pubic louse)کہا جاتا ہے۔

مزید جانئے: ’ایڈز‘ کا گاﺅں، وہ علاقہ جس کی ایک تہائی آبادی اس افسوسناک بیماری میں مبتلا ہے، یہ پھیلی کس طرح؟ وجہ وہ نہیں جو آپ سوچ رہے ہیں

برطانوی اخبار ”ڈیلی میل“ کی رپورٹ کے مطابق ڈاکٹروں کا کہنا تھا کہ ”یہ جوئیں گول شکل کی ہوتی ہیں اور ان کی رنگت سیاہ ہوتی ہے۔ ان کی ٹانگیں اور ایک بڑا پنچہ ہوتا ہے جس سے یہ انسانی جسم کو کھرچتی ہیں۔ یہ کیڑے انسان کے گندے اور بے سلیقہ بالوں پر پرورش پاتے ہیں، خاص طور پر پیٹ کے نچلے حصے پر موجود بال ان کی آماجگاہ ہوتے ہیں۔“ ڈاکٹروں نے اس شخص کے پیٹ سے بال صاف کرکے ایک مخصوص کریم استعمال کی جس سے یہ جوئیں مر گئیں اور وہ شفایاب ہو گیا۔ ڈاکٹروں نے جوﺅں کی ایک ویڈیو بنا کر انٹرنیٹ پر شیئر کر دی جہاں اسے بہت زیادہ دیکھا جا رہا ہے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس


loading...