قائد اعظم پاکستان کو جدید اسلامی ، جمہوری، فلاحی ریاست بنانا چاہتے تھے، رفیق تارڑ

قائد اعظم پاکستان کو جدید اسلامی ، جمہوری، فلاحی ریاست بنانا چاہتے تھے، ...

لاہور( پ ر) تحریک پاکستان کے مخلص کارکن،سابق صدر اسلامی جمہوریہ پاکستان وچیئرمین نظریۂ پاکستان ٹرسٹ محمد رفیق تارڑ نے کہا ہے کہ قائداعظمؒ پاکستان کو ایک جدید اسلامی‘ جمہوری اور فلاحی ریاست بنانے کے خواہش مند تھے جہاں ہر مذہب‘ نسل اور رنگ کے لوگ باوقار انداز میں زندگی بسر کرسکیں۔ قائداعظم محمد علی جناحؒ نے یہ مملکت نظرےۂ پاکستان یا دو قومی نظریے کی بنیاد پر حاصل کی تھی۔ جمہوریت کی مضبوطی پاکستان کے اندرونی اتحاد اور بیرونی سلامتی کی ضامن ہے۔ ان خیالات کااظہارانہوں نے ایوان کارکنان تحریک پاکستان، شاہراہ قائداعظمؒ لاہور میں بانئ پاکستان حضرت قائداعظم محمد علی جناحؒ کے 139ویں یوم ولادت کے موقع پرمنعقدہ خصوصی تقریب سے صدارتی خطاب کے دوران کیا۔ تقریب کے مہمانان خاص تحریک پاکستان کے گولڈ میڈلسٹ کارکنان تھے ۔ اس تقریب کااہتمام نظریۂ پاکستان ٹرسٹ نے تحریک پاکستان ورکرز ٹرسٹ کے اشتراک سے کیا تھا۔ نشست کا باقاعدہ آغاز تلاوت کلام پاک،نعت رسول مقبولؐ اورقومی ترانہ سے ہوا ۔تلاوت کلام پاک کی سعادت حافظ محمد عمر اشرف نے حاصل کی جبکہ الحاج اختر حسین قریشی نے بارگاہ رسالت مآبؐ میں ہدیۂ عقیدت پیش کیا۔ معروف نعت خواں حافظ مرغوب احمد ہمدانی نے کلام اقبالؒ پیش کیا۔ اس تقریب کی نظامت کے فرائض عثمان احمد نے ادا کیے۔ محمد رفیق تارڑ نے کہا کہ بانئ پاکستان قائداعظم محمد علی جناحؒ کے 139ویں یومِ ولادت پر میں آپ سب کو تہہ دل سے مبارکباد پیش کرتا ہوں اور ربِّ کائنات کے حضور دعاگو ہوں کہ وہ ہمیں بابائے قوم کے اصولوں ’’ایمان‘ اتحاد‘ تنظیم‘‘ پر چلنے اور اس مملکت کو حقیقی معنوں میں قائد کا پاکستان بنانے کی توفیق عطا فرمائے(آمین)۔

مزید : میٹروپولیٹن 1


loading...