حکومت ریذیڈنشل بیسڈ ہاکی اکیڈمیاں قائم کر کے کھلاڑیوں کی گرومنگ کرے، شہباز سینئر

حکومت ریذیڈنشل بیسڈ ہاکی اکیڈمیاں قائم کر کے کھلاڑیوں کی گرومنگ کرے، شہباز ...

ہری پور (اے پی پی) پاکستان ہاکی فیڈریشن کے سیکرٹری شہباز سینئر نے کہا ہے کہ قومی کھیل میں 15 سالوں کی خرابیاں دور کرنے میں کم از کم تین سے چار سال لگیں گے، حکومت ریذیڈنشل بیسڈ ہاکی اکیڈمیاں قائم کر کے وہاں نوجوان کھلاڑیوں کو وظائف، ہاسٹل او رول ماڈل کوچز فراہم کر کے ان کی گرومنگ کرے، لڑکوں کو ماڈرن ہاکی سکھا کر قومی ہاکی کو دوبارہ دوام بخش سکتے ہیں، بدقسمتی سے گذشتہ ڈیڑھ دہائی سے پاکستان ہاکی کسی بھی سطح پر اول ترجیح کے طور پر نظر نہیں آئی، قومی کھیل سے بے اعتنائی برتی جا رہی ہے۔

ہاکی میں پاکستان کو کھویا ہوا مقام واپس دلوانے کیلئے کوئی نہیں سوچ رہا اور ہاکی کیلئے کوئی بھی کچھ نہیں کر رہا۔ وہ گذشتہ روز کھلابٹ میں محکمہ تعلیم کے زیراہتمام خیبر پختونخوا سکولز گیمز کے سلسلہ میں منعقدہ خیبر پختونخوا ہائی و ہائیر سکینڈری سکولز ہاکی چیمپئن شپ کی افتتاحی تقریب کے موقع پر مہمان خصوصی کی حیثیت سے منعقدہ تقریب سے خطاب کر رہے تھے۔

مزید : کھیل اور کھلاڑی