مصر: سکیورٹی فورسز پر حملوں میں ملوث 15مجرمان کو پھانسی دیدی گئی

مصر: سکیورٹی فورسز پر حملوں میں ملوث 15مجرمان کو پھانسی دیدی گئی

قاہرہ ( آن لائن )مصر میں سیکیورٹی فورسز پر جزیرہ نما سینائی میں حملے میں ملوث 15 مجرمان کو پھانسی دے دی گئی۔ حکام کا کہنا تھا کہ مجرمان کو مصر کی دو جیلوں میں تختہ دار پر لٹکایا گیا، جہاں انہیں فوجی عدالتوں کی جانب سے سزائے موت سنائے جانے کے بعد قید رکھا گیا تھا۔شمال افریقی ملک میں 2015 میں چھ دہشت گردوں کو پھانسی کے بعد ایک ساتھ اتنے مجرمان کو تختہ دار پر لٹکائے جانے کی یہ سب سے زیادہ تعداد ہے۔مجرمان کو پھانسی دہشت گرد تنظیم داعش کی طرف سے شمالی سینائی میں ہیلی کاپٹر پر اینٹی ٹینک میزائل سے حملے کے ایک ہفتے بعد دی گئی۔ہیلی کاپٹری پر حملہ مصر کے وزرائے دفاع اور داخلہ کے دورے کے دوران کیا گیا، جس میں انہیں تو کوئی نقصان نہیں پہنچا لیکن وزیر دفاع کے نائب، ہیلی کاپٹر پائلٹ سمیت ہلاک ہوئے۔داعش کے مقامی گروپ کی جانب سے سینائی میں حملوں کے دوران سیکڑوں پولیس اور فوجی اہلکاروں کو ہلاک کیا جاچکا ہے، جبکہ عام شہریوں پر بھی متعدد حملے کیے گئے ہیں۔2013 میں محمد مرسی کی حکومت کا تختہ الٹنے کے بعد مصری عدالتیں سیکڑوں مجرمان کو سزائے موت سنا چکی ہیں۔تاہم کئی مجرمان نے فیصلوں کے خلاف دائر کی گئی درخواستوں میں کامیابی حاصل کی۔

پھانسی

مزید : علاقائی