کرشنگ سیزن شروع نہ کرنیوالے شوگر ملز مالکان کیخلاف کارروائی اور 180روپے من خریداری یقینی بنانے کے حکم پر عملدرآمد کی تفصیلی رپورٹ طلب

کرشنگ سیزن شروع نہ کرنیوالے شوگر ملز مالکان کیخلاف کارروائی اور 180روپے من ...

لاہور(نامہ نگار خصوصی )لاہورہائیکورٹ نے گنے کاکرشنگ سیزن شروع نہ کرنے والے ملز مالکان کے خلاف کارروائی اور180روپے فی من کے حسابA سے گنے کی خریداری یقینی بنانے کے عدالتی حکم پر عمل درآمد کی تفصیلی رپورٹ طلب کرلی ہے۔جسٹس ساجد محمود سیٹھی نے کیس کی سماعت کی،درخواست گزارامیر جماعت اسلامی پنجاب میاں مقصود احمدکے وکیل سیف الرحمن جسرا نے عدالت کو بتایا کہ قانون کے تحت ملز مالکان اکتوبر سے ملیں چلانے کے پابند ہیں۔اکتوبر اور نومبر ختم ہونے کے باوجودشوگر ملین نہیں چلائی جا رہی جس کی وجہ سے گنے کے کاشتکاروں اور غریب کسانوں کا نقصان ہو رہا ہے۔رواں سیزن کی کرشنگ شروع نہ ہونے سے جنوبی پنجاب میں 40 ارب روپے سے زائدرقم ڈوبنے کا خدشہ ہے۔اسسٹنٹ کین کمشنر نے بتایاکہ وزیراعلیٰ پنجاب کی ہدایت پرصوبہ بھر کی شوگرملز کوکرشنگ سیزن فوری شروع کرنے اورفی من گنا 180روپے کی خریداری یقینی بنانے کی ہدایات جاری کی گئی ہیں۔ خلاف ورزی کے مرتکب مالکان کے خلاف فوجداری مقدمات درج کئے جارہے ہیں جبکہ شکایات کے ازالہ کے لئے ٹول فری نمبردیاگیا ہے۔اس کیس کی مزید سماعت 28دسمبرکو ہوگی ۔

کرشنگ سیزن

مزید : علاقائی