کوہاٹ ،حلقہ 39 کے عوام کو تبدیلی کے ثمرات نہ پہنچ سکے

کوہاٹ ،حلقہ 39 کے عوام کو تبدیلی کے ثمرات نہ پہنچ سکے

کوہاٹ(بیورو رپورٹ) حلقہ 39 کی عوام تک تبدیلی کے ثمرات نہ پہنچ سکے اپنے بھائی کو تحصیل ناظم بنانے کے علاوہ صوبائی وزیر قانون ساڑھے چار سالوں میں کوئی سکیم مکمل نہ کر سکے شکردرہ سمیت حلقہ 39 کی عوام آج بھی پینے کے صاف پانی‘ تعلیم اور صحت کی سہولیات کے لیے ترس رہی ہے گزشتہ ساڑھے چار سالوں میں کسی ایک بھی بڑے منصوبے کا مکمل نہ ہونا لمحہ فکریہ ہے ٹی ایم اے کی نگرانی میں بننے والے منصوبے سفید ہاتھی بن چکے ہیں جو مکمل ہونے کا نام نہیں لے رہے ان خیالات کا اظہار شکردرہ سمیت لاچی اور دیگر علاقوں کے عمائدین نے میڈیا نمائندوں کے ساتھ بات چیت کے دوران کیا ان عمائدین کا کہنا تھا کہ ہم نے عمران خان کی پکار پر تبدیلی کے لیے ووٹ دیئے ہم کل بھی خان کے ساتھ تھے اور آئندہ بھی رہیں گے مگر ہمارے وزیر قانون جو کہ منتخب ممبر صوبائی اسمبلی بھی ہیں وہ بتائیں کہ ان ساڑھے چار سالہ دور میں جب وہ پہلے ڈپٹی سپیکر اور اب وزیر قانون ہیں انہوں نے حلقہ میں کتنے ایسے میگا پراجیکٹس ہیں جن کا سنگ بنیاد بھی خود رکھا ہو اور افتتاح بھی کر لیا ہو انہوں نے مزید کہا کہ شکردرہ میں لائبریری کے قیام کا وعدہ کہاں گیا چشمی واٹر سپلائی کا کیا ہوا جرگہ ہال کا کیا ہوا چیتری روڈ کیوں مکمل نہیں ہو رہا عطاء آباد روڈ کہا پہنچا شاہ پور یونین کونسل کے علاقہ فتح خان خیل میں کمیونٹی سینٹر کا جو اعلان کیا تھا اس کا کیا ہوا ساڑھے سار چالوں میں بڑھ جبی روڈ کی حالت کیوں نہ تبدیل ہوئی تاندہ ڈیم روڈ آج تک کیوں مکمل نہ ہو سکا شکردرہ بازار کی حالت کیوں قابل افسوس ہے ان عمائدین علاقہ کا کہنا تھا کہ امتیاز قریشی نے رائلٹی فنڈ کو غلط اور اپنی مرضی سے استعمال کیا حالانکہ رائلٹی فنڈ یونین کونسل کی عوام کی مرضی سے استعمال ہوتا ہے ان مشران علاقہ نے وزیر اعلیٰ پرویز خٹک کے دورہ کا خیر مقدم کرتے ہوئے کہا کہ وزیر اعلیٰ صاحب آ ان کالجز‘ ہسپتال اور واٹر سپلائی منصوبوں کا سنگ بنیاد رکھ رہے ہیں انہیں احساس نہیں کہ چار ماہ بعد ان کی حکومت ختم ہو جائے گی وہ اپنے وزیر قانون سے کیوں نہیں پوچھتے کہ انہوں نے ساڑھے چر سالوں میں تعلیم اور صحت سمیت آبنوشی کی کتنی سکیمیں سو فیصد مکمل کیں جبکہ 2013-14 رائلٹی فنڈ کے کتنے کام آج بھی ادھورے پڑے ہیں علاقہ عمائدین کا کہنا تھا کہ اگر ان ساڑھے چار سالوں میں امتیاز قریشی نے کوئی کام مکمل پلاننگ کے ساتھ کر کے مکمل کیا ہے تو وہ ان کے اپنے بھائی اشفاق قریشی ہیں جنہوں نے محکمہ تعلیم کے سابقہ جونیئر کلرک کو آج تحصیل ناظم کے عہدے پر لا بٹھایا ہے شکردرہ سمیت حلقہ 39 کے مختلف علاقوں کے عمائدین نے امید ظاہر کی کہ وزیر اعلیٰ پرویز خٹک جو کہ عوام دوست شخصیت ہیں وہ ڈپٹی کمشنر کوھاٹ کو یہ ڈیوٹی دیں گے کہ کئی سالوں سے ادھوری پڑی سکیموں کو دن رات ایک کر کے مکمل کریں تاکہ عوام کو سہولت میسر ہو سکے۔

مزید : پشاورصفحہ آخر