سارے گارڈن ٹاﺅن کی بربادی پھیر دی ،راشد لطیف میڈیکل کالج کا نقشہ منظو ر کرنے پر سپریم کورٹ نے ڈی جی ایل ڈی اے کو طلب کرلیا

سارے گارڈن ٹاﺅن کی بربادی پھیر دی ،راشد لطیف میڈیکل کالج کا نقشہ منظو ر کرنے ...
سارے گارڈن ٹاﺅن کی بربادی پھیر دی ،راشد لطیف میڈیکل کالج کا نقشہ منظو ر کرنے پر سپریم کورٹ نے ڈی جی ایل ڈی اے کو طلب کرلیا

  

لاہور(نامہ نگارخصوصی) سپریم کورٹ نے از خود نوٹس کیس میں راشد لطیف میڈیکل کالج کے مالک کے طلبی کے باوجود پیش نہ ہونے پر برہمی کا اظہار کرتے ہوئے قرار دیا ہے کہ سارے گارڈن ٹاﺅن کی بربادی پھیر دی گئی ہے، عدالتی کمیشن خود راشدلطیف میڈیکل کالج کی انسپکشن کرے گا، عدالت نے 28دسمبر کو ڈی جی ایل ڈی اے زاہد اختر زمان اور کالج کے مالک ڈاکٹر حمید لطیف کو تعمیراتی پلان سمیت طلب کر لیا ہے۔

عدالتی طلبی پر راشد لطیف میڈیکل کالج کے پرنسپل ڈاکٹر فرخ نعمان پیش ہوئے، چیف جسٹس نے استفسار کیا کہ عدالت نے تو میڈیکل کالج کے مالک کو طلب کر رکھا تھا، کالج کے مالک کہاں ہیں؟پرنسپل کو عدالت میں پیشی کے لئے بھیج دیا گیا ہے، ڈاکٹر فرخ نعمان نے بتایا کہ پی ایم ڈی سی رولز کے مطابق میڈیکل کالج کا پرنسپل ہی کالج کا چیف ایگزیکٹو تصور کیا جاتا ہے ، چیف جسٹس نے برہمی کااظہار کرتے ہوئے کہا کہ پراپرٹی کے مالک کو عدالت میں بھیجیں، فیروز پور روڈ پر سارے گارڈن ٹاﺅن کی بربادی پھیر دی گئی ہے، حمید لطیف ہسپتال کے باہر پارکنگ کا انتظام ہی موجود نہیں ہے، ہسپتال کی تعمیر کی منظوری کہاں سے لی گئی، عمارت کی تعمیر کے لئے منظور کیا گیا ،پلان بھی عدالت میں پیش کریں کہ کیسے حمید لطیف ہسپتال کی عمارت تعمیر کی گئی؟ چیف جسٹس نے حکم دیا کہ کل ڈی جی ایل ڈی اے زاہد اختر زمان بھی حمید لطیف ہسپتال تعمیر سے متعلق منظور کئے گئے پلان کی دستاویزات سمیت عدالت میں پیش ہوں۔

مزید : علاقائی /پنجاب /لاہور