محکمہ اسکولز ایجوکیشن میں انفارمیشن ٹیکنالوجی کا جدید نظام لائیں گے : مراد راس

محکمہ اسکولز ایجوکیشن میں انفارمیشن ٹیکنالوجی کا جدید نظام لائیں گے : مراد ...

  

لاہور( لیڈی رپورٹر)صوبائی وزیر سکولز ایجوکیشن مراد راس نے کہا ہے کہ قومی ترقی و خوشحالی کے 100روزہ ایجنڈے کی روشنی میں محکمہ سکولز ایجوکیشن میں انفارمیشن اینڈ کمیونیکیشن ٹیکنالوجی کا مربوط نظام متعارف کروایا جا رہا ہے۔اس حوالے سے انٹیگریٹڈ مینجمنٹ انفارمیشن سسٹم ڈیزائن کیا گیا ہے۔اس سسٹم کی سب سے بڑی خوبی یہ ہے کہ اب تمام محکمانہ ڈیٹا، ریکارڈ اور معلومات ایک ہی کلک پر دستیاب ہوں گی جس سے اساتذہ ، طالبعلموں اور لوگوں کے مسائل فوری حل ہوں گے اور محکمانہ پالیسی کو تشکیل دینے میں مدد ملے گی۔یہ بات انہوں نے یہاں اپنے دفتر میں ماہرین تعلیم اور اساتذہ کے وفد سے گفتگو کرتے ہوئے کہی۔صوبائی وزیر نے بتایا کہ انفارمیشن اینڈ کمیونیکیشن ٹیکنالوجی کے جدید اور مربوط نظام سے محکمہ سکولز ایجوکیشن سے متعلقہ تمام معاملات با آسانی نبٹائے جا سکیں گے۔

۔اس طرح محکمہ سکولز ایجوکیشن سے متعلقہ مسائل کا بر وقت حل ممکن ہو گا اور 100روزہ ایجنڈے کے اہداف کے حصول کیلئے پالیسی سازی میں بھی مدد ملے گی۔صوبائی وزیر مراد راس نے کہا کہ پنجاب کے 20منتخب اضلاع میں’’ انصاف سکول پروگرام‘‘ کے نام سے مارچ 2019 میں آفٹر نون سکولز کا آغاز کیا جا رہا ہے۔انہوں نے کہا کہ انصاف سکول پروگرام کے ذریعے چھٹی کلاس میں ڈراپ آؤٹ پر قابو پانے اور شرح داخلہ میں سو فیصد اضافے میں مدد ملے گی۔اس پروگرام کا مقصد سکولوں پر بوجھ کم کرنا اور با لخصوص طالبات کو اپنے گھروں کے نزدیک سرکاری سکولوں میں حصول تعلیم کے مواقع فراہم کرنا ہے۔انہوں نے کہا کہ حکومت کی کوشش ہے کہ سرکاری سکولوں کا مجموعی معیار بڑھایا جائے اور ہم نصابی و سپورٹس سرگرمیوں کی بھر پور حوصلہ افزائی کی جائے۔ ہمارا عزم ہے کہ سرکاری سکولوں کی تعلیمی کوالٹی اتنی بہتر ہو کہ لوگ اپنے بچوں کیلئے سرکاری سکولوں کو ترجیح دیں۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -