پیپلز پارٹی نے بجلی کی قیمتوں میں اضافے کو مسترد کر دیا

 پیپلز پارٹی نے بجلی کی قیمتوں میں اضافے کو مسترد کر دیا

  



اسلام آباد(آئی این پی) پاکستان پیپلز پارٹی نے بجلی کی قیمتوں میں اضافے کو مسترد کر دیا، پیپلز پارٹی کی نائب صدر سینیٹر شیری رحمان نے کہا ہے کہ نومبر میں حکومت نے بجلی 1روپیہ 82پیسے فی یونٹ مہنگی کی تھی، ایک ماہ بعد بجلی کی قیمتون میں اضافہ کس بنیاد پر کیا گیا ہے؟ ایک ماہ میں حکومت نے بجلی کی مد میں صارفین پر 38ارب کا بوجھ ڈالا ہے، ہر ماہ فیول پرائس ایڈجسٹمنٹ کا بہانہ بنا کر بجلی کی قیمتون میں اضافہ کیا جا رہا۔ جمعرات کو اپنے ایک بیان میں سینیٹر شیری رحمان نے کہا کہ حکومت نے 2019کے ابتدا سے لے کر اختتام تک مہنگائی کے علاوہ عوام کو کچھ نہیں دیا، سال کے اختتام پر حکومت نے عوام کو مہنگائی کا تحفہ دیا ہے، منی بجٹ کی علیحدہ تیاریاں ہو رہی ہیں، شیری رحما ن نے کہا کہ منی بجٹ سرکار نے ملک کی معیشت کو تباہ کر دیا ہے، مہنگائی کے علاوہ اس حکومت کے پاس کوئی معاشی پالیسی نہیں۔

شیری رحمن

مزید : صفحہ آخر