بنگلہ دیش نے ایک مرتبہ پھر پاکستانی کرکٹرز کے ساتھ ہاتھ کردیا

بنگلہ دیش نے ایک مرتبہ پھر پاکستانی کرکٹرز کے ساتھ ہاتھ کردیا
بنگلہ دیش نے ایک مرتبہ پھر پاکستانی کرکٹرز کے ساتھ ہاتھ کردیا

  



نئی دہلی(مانیٹرنگ ڈیسک) بنگلہ دیش کرکٹ بورڈ (بی سی بی)آئندہ سال مارچ میں ایشیاءالیون اور ورلڈ الیون کے مابین دو ٹی 20میچز کروانے جا رہا ہے۔ بھارت کے دباﺅ پر ان میچز کے لیے پاکستان کے ساتھ ایک بار پھر ہاتھ کرتے ہوئے ٹیموں میں پاکستانی کھلاڑیوں کو شامل نہ کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ ٹائمز آف انڈیا کے مطابق آئی سی سی ایسے میچز کو آفیشل سٹیٹس دیتا ہے۔ان میچز کے حوالے سے کرکٹ کے مداح منتظر تھے کہ انہیں پاکستانی اور بھارتی کرکٹر کو ایک ساتھ کھیلتے دیکھنے کا موقع ملے گا مگر بھارتی کرکٹ بورڈ (بی سی سی آئی)کے جوائنٹ سیکرٹری جیش جارج نے پاکستانی کھلاڑیوں کو نہ کھلانے کی خبر دے کر مداحوں کی توقعات پر پانی پھیر دیا ہے۔

جیش جارج نے کہا ہے کہ ”اس میچز میں ایسا کوئی امکان نہیں کہ پاکستان اور بھارت کے کھلاڑی ایک ساتھ ایشیاءالیون میں کھیلیں۔ دونوں ملکوں کے کھلاڑیوں کے اکٹھے کھیلنے کا کوئی سوال ہی پیدا نہیں ہوتا اور ان میچز کے لیے پاکستانی کھلاڑیوں کو دعوت ہی نہیں دی جائے گی۔“ ان کا کہنا تھا کہ ”اس وقت ہم اتنا جانتے ہیں کہ ایشیاءالیون میں کوئی پاکستانی کھلاڑی شامل نہیں ہو گا۔ پانچ کھلاڑیوں کا انتخاب سارو گنگولی کریں گے کہ کون کون سے پانچ کھلاڑی ایشیاءالیون کا حصہ ہوں گے۔ “

یہاں یہ امر بھی قابل ذکر ہے کہ بنگلہ دیش کرکٹ بورڈ کی طرف سے یہ دو میچز بنگلہ دیش کے بانی شیخ مجیب الرحمان کی 100سالگرہ کی تقریبات کے حوالے سے کروائے جا رہے ہیں۔ چنانچہ یہ سوال بھی پیدا ہوتا ہے کہ اگر شیخ مجیب الرحمان کے 100ویں جنم دن کی خوشی منانے کے لیے جو میچز کروائے جا رہے ہیں ان میں شرکت کے دعوت نامے موصول بھی ہوتے تو کیا پاکستان اپنے کھلاڑیوں کو بھیجنے پر رضامند ہو جاتا؟

مزید : کھیل


loading...