پاکستانی ٹیم کو اچھے اوپنر اور وکٹ کیپر کی ضرورت ہے، عامر سہیل

پاکستانی ٹیم کو اچھے اوپنر اور وکٹ کیپر کی ضرورت ہے، عامر سہیل

لاہور(آن لائن) سابق کپتان عامر سہیل نے کہا ہے کہ پاکستانی ٹیم کو فوری طور پر ایک اچھے اوپنر اور وکٹ کیپر کی ضرورت ہے، مضبوط ٹیموں کی کامیابیوں میں وکٹ کیپرز کی اچھی بیٹنگ اہم کردار ادا کرتی ہے، نئے کرکٹرز کو فٹنس کی اہمیت کا اندازہ نہیں۔ایک انٹرویو میں عامر سہیل نے کہاکہ احمد شہزاد باصلاحیت ہیں لیکن ناصر جمشید کو ڈراپ اور محمد حفیظ کو تیسری پوزیشن پر بیٹنگ کیلیے بھیجنے کا فیصلہ کرنے کے بعد پاکستانی ٹیم کو ایک اچھے اوپنر کی سخت ضرورت ہے، انھوں نے کہا کہ دنیا کی تمام مضبوط ٹیموں کے بولنگ اور بیٹنگ کا آغاز کرنے والے پیئرز مضبوط ہوتے ہیں جبکہ گرین شرٹس کی اننگز شروع کرنے والی جوڑی مستحکم نہیں۔ عامر سہیل کے مطابق پاکستان کو ایسا وکٹ کیپر بھی تلاش کرنا ہوگا جواچھی بیٹنگ کر سکے،جدید کرکٹ میں وکٹوں کے پیچھے گلوز سنبھالنے والے اچھے بیٹسمین کے طور پر رنز بھی اسکور کرکے ٹیموں کی کامیابیوں میں اہم کردار ادا کرتے ہیں، اس کا ایک ثبوت یہ ہے کہ جب میٹ پرائر نے اچھی کارکردگی دکھائی تو انگلینڈ ایشز جیت گیا، اب ہیڈن نے اہم مواقع پر قیمتی رنز بنائے تو فتح نے آسٹریلوی ٹیم کے قدم چوم لیے۔

انھوں نے کہاکہ نئے کرکٹرز کو فٹنس کی اہمیت کا اندازہ نہیں، ہمیں جسمانی اور ذہنی طور ایسے مضبوط کھلاڑی تیار کرنے چاہئیں جو بہتر تکنیک کے ساتھ حریف ٹیموں سے ٹکر لے سکیں، اس مقصد کو حاصل کرنے کیلیے ڈومیسٹک کرکٹ میں ہی بھرپور توجہ دینی چاہیے، یہی کھیل کا ترقیاتی منصوبہ ہو گا۔ سابق اوپننگ بیٹسمین نے کہاکہ کپتان اور کوچ کی اپنی حکمت عملی ہوتی ہے، دونوں دلیل سے اپنی بات منوانے کی کوشش کریں تو بہتر ہوتا ہے، دونوں کے ساتھ سلیکشن کمیٹی کا ہم آہنگ ہونا ضروری ہے کیونکہ ٹیم کا چناﺅ تو دستیاب کرکٹرز کے پول سے ہی ہوگا۔

مزید : کھیل اور کھلاڑی