پنجاب حکومت ہر سال 40ہزار اساتذہ بھرتی کریگی ،رانا مشہود

پنجاب حکومت ہر سال 40ہزار اساتذہ بھرتی کریگی ،رانا مشہود

لاہور(ایجوکیشن رپورٹر) پنجاب ایجوکیشن روڈ میپ پروگرام سے ایجوکیشن سیکٹر کو اکیسویں صدی کے تقاضوں کے مطابق ڈھالنے میں نمایاں مدد ملی ہے۔ اس پروگرام کے تحت سرکاری سکولوں میں عدم دستیاب سہولیات کی دستیابی سے معیار تعلیم کی بہتر ی کے ساتھ ساتھ شرح داخلہ بھی بہتر ہوئی ہے۔اس پروگرام کی افادیت کے پیش نظر اگلے فیز میں کوالٹی ایجوکیشن پر خصوصی توجہ دی جائے گی۔ اس فیز میں ہمارا سلوگن ہو گا \"ہر بچے کے ہاتھ میں قلم ،ہر سکول سے ملے بہتر علم\"۔یہ بات صوبائی وزیر تعلیم رانا مشہوداحمد خان نے ایجوکیشن ایجنڈا 2018پر لاہور بورڈ میں منعقدہ اجلاس سے خطاب میں کہی۔ اجلاس میں چےئرمین پنجاب ایجوکیشن فاؤنڈیشن انجینئر قمر الاسلام راجہ ، محکمہ سکول ایجوکیشن کے افسران ، مکینزی روڈمیپ پروگرام کے اراکین اور مختلف اراکین اسمبلی بھی موجود تھے۔ وزیر تعلیم نے بتایا کہ ایک لاکھ دس ہزار اساتذہ کی بھرتی مکمل ہو چکی ہے ، اب ہر سال 40ہزار اساتذہ بھرتی کیے جائیں گے ۔ انہوں نے کہا کہ سکول کونسل کو فعال بنا کر تعلیمی اداروں کو مثالی بنایا جائے گا۔ پائلٹ پروجیکٹ کے تحت چھٹی تا دہم کلاس کے سائنس ٹیچرز کے لیئے ساٹھ ہزار ٹیبلٹس کی اصولی منظوری دے دی گئی ہے ،ان میں پروجیکٹربھی ہو گا۔اسی طرح آٹھویں کلاس کے نوہزار طالبعلموں کے علاوہ پانچ منتخب سکولوں کے ایک ہزار بچوں کو بھی ٹیبلٹس مہیا کئے جائیں گے۔ ان ٹیبلٹس میں کورس بلٹ ان ہو گا اوریہ طالبعلم اپنا ہوم ورک ٹیبلٹس پر کریں گے۔اس حوالے سے یہ فیصلہ بھی کیا گیا ہے کہ ٹیبلٹس کو پاکستان کے اندر ہی بنایا جائے۔ صوبائی وزیر نے مزید بتایا کہ طالبعلموں کی سہولت کے لیئے وائی فائی ہب قائم کیئے جائیں گے۔چےئرمین پیف قمر الا سلام نے اجلاس کو بتایا کہ پنجاب ایجوکیشن فاؤنڈیشن پبلک پرائیویٹ پارٹنرشپ کے ذریعے اپریل تک 225نئے شراکتی سکولز کھولے گی۔

مزید : علاقائی