ملاوٹ مافیا کے خلاف بڑی کارروائیاں ،فیٹ رینڈرنگ سمیت 3یونٹ سیل

ملاوٹ مافیا کے خلاف بڑی کارروائیاں ،فیٹ رینڈرنگ سمیت 3یونٹ سیل

  

لاہور )جنرل رپورٹر)ڈائریکٹر جنرل پنجاب فوڈ اتھارٹی کیپٹن (ر) محمد عثمان کی سربراہی میں ملاوٹ مافیا کے خلاف لاہور اور شیخوپورہ میں بڑی کارروائیاں کرتے ہوئے فیٹ رینڈرنگ یونٹس سمیت3یونٹس کو سیل کر دیا۔4000 کلو جانوروں کی باقیات، 1600 کلوناقص آئل ، 2800 کلو فنگس لگا مربہ تلف جبکہ1900 کلو مٹری دال،500 کلو سویاں اور 280 کلو مٹری بیسن برآمد کر لیا گیا۔تفصیلات کے مطابق ڈی جی فوڈ اتھارٹی کی سربراہی میں فوڈ سیفٹی ٹیموں نے کوٹ عبدالمالک میں کارروائی کرتے ہوئے جانوروں کی آلائشوں سے تیل نکالنے،استعمال شدہ آئل میں ملا کر فروخت کرنے، آئل سپلائی ریکارڈ عدم موجود ہونے پر ذوالفقار فیٹ رینڈرنگ یونٹ کو سیل کر دیا۔فوڈ سیفٹی ٹیموں نے فنگس لگے مربہ میں مردہ مکھیوں کی موجودگی اور لائسنس نہ ہونے پر المعصومیہ پنجاب فروٹ، ہرن مینار کا پروڈکشن یونٹ سر بمہر کیا۔مزید برآں سابقہ دی گئی ہدایات پر عمل نہ کرنے،مٹری دال کو کھلے ناقص مصالحہ جات اور ناقص رنگ لگا کر نمکو تیار کرنے پر قادری سویٹس اینڈ نمکو یونٹ کو سیل کیاگیا۔ڈی جی فوڈ اتھارٹی کا کہنا تھا کہ پی ایف اے قوانین میں مٹری دال کا انسانی خوراک میں استعمال ممنوع قرار دیا گیا ہے۔اسی طرح آلائشوں سے نکلے تیل کی صرف بائیو ڈیزل میں استعمال کی اجازت ہے۔کارروائی کے دوران آلائشوں سے نکلے تیل کو استعمال شدہ آئل میں شامل کرکے فروخت کرنے کے شواہد بھی پائے گئے ہیں۔ مربہ کی تیاری میں گلے سڑے پھلوں کو کھلے رنگ، مصنوئی میٹھاس اور کیمیکل لگا کراستعمال کیا جا رہا تھا۔فوڈ سیفٹی ٹیموں نے کارروائیوں کے دوران4000 کلو جانوروں کی باقیات، 1600 کلوناقص آئل،2800 کلو فنگس لگا مربہ تلف جبکہ1900 کلو دال مٹری،500 کلو سویاں اور 280 کلو مٹری بیسن بھی برآمد کر لیا گیا۔کیپٹن (ر) محمد عثمان کا مزید کہنا تھا کہ زیادہ منافع کمانے کے لالچ میں عوام کی صحت سے کھیلنے والوں کے خلاف سخت کاروائی عمل میں لائی جاتی رہے گی۔عوام سے گزارش ہے کہ باہر کی نسبت گھر کی بنی اشیاء خورونوش کو ترجیح دیں۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -