19 گولڈ میڈل جیتنے والی پاکستانی کھلاڑی نقش ہمدانی کی سپانسر نہ ملنے کے باعث ورلڈ تائیکوانڈو چیمپیئن شپ میں شرکت مشکوک

19 گولڈ میڈل جیتنے والی پاکستانی کھلاڑی نقش ہمدانی کی سپانسر نہ ملنے کے باعث ...
19 گولڈ میڈل جیتنے والی پاکستانی کھلاڑی نقش ہمدانی کی سپانسر نہ ملنے کے باعث ورلڈ تائیکوانڈو چیمپیئن شپ میں شرکت مشکوک

  

کراچی (ڈیلی پاکستان آن لائن) تائیکوانڈو کے کھیل میں 19 گولڈ میڈل جیتنے والی پاکستانی کھلاڑی نقش ہمدانی کا ورلڈ چیمپیئن شپ میں شرکت کا خواب ٹوٹنے کے قریب پہنچ گیا۔ تائیکوانڈو فیڈریشن کے پاس فنڈز نہ ہونے اور سپانسر نہ ملنے کے باعث نقش ہمدانی کی چیمپیئن شپ میں شرکت مشکوک ہوگئی۔

کراچی سے تعلق رکھنے والی نقش ہمدانی پاک فوج کی طرف سے تائیکوانڈو کے مقابلوں میں حصہ لیتی ہیں۔ ان کے بہنوئی کیپٹن حسنین بھی پاک فوج کے افسر ہیں۔ نقش ہمدانی نے چوتھی جماعت سے تائیکوانڈو کی پریکٹس شروع کی اور آج وہ بلیک بیلٹ اور نیشنل چیمپئن  ہیں۔صرف یہی نہیں بلکہ وہ تائیکوانڈو کی خواتین کی رینکنگ میں پاکستان میں نمبر ون ہیں جو اب تک مختلف قومی مقابلوں میں 19 گولڈ میڈل جیت چکی ہیں جبکہ کئی عالمی مقابلوں میں بھی پاکستان کی نمائندگی کا اعزاز حاصل کر چکی ہیں ۔نقش ہمدانی نے رواں سال مئی میں برطانوی شہر مانچسٹر میں ورلڈ تائیکوانڈو چیمپیئن شپ میں شرکت کرنی ہے تاہم فنڈز نہ ہونے کے باعث ان کی شرکت مشکوک ہوگئی ہے۔ پاکستان تائیکوانڈو فیڈریشن کے مطابق نقش ہمدانی کی ورلڈ چیمپیئن شپ میں شرکت پر ساڑھے 3 لاکھ روپے کے اخراجات آئیں گے جو فیڈریشن نہیں اٹھاسکتی۔

پاکستان کی اس ہونہار بیٹی کے والد راحیل  ہمدانی  کی خواہش ہے کہ ان کی باصلاحیت لخت جگر  عالمی ایونٹ میں شریک ہو اور پاکستان کے لئے پہلی مرتبہ عالمی اعزاز حاصل کرنے میں کامیاب ہو۔راحیل ہمدانی کا کہنا تھا کہ انہوں نے اپنی بیٹیوں کو مکمل سپورٹ کیا اور انہیں اعلیٰ تعلیم دلائی ،آج بھی وہ اپنے محدود وسائل ہونے کے باوجود  ملک کی اس ہونہار بیٹی اور اپنی لخت جگر  نقش ہمدانی کی نہ صرف مکمل سرپرستی کر رہے ہیں بلکہ ہر جگہ اسے اپنے ساتھ لے کر جاتے ہیں ۔انہوں نے کہا کہ میری ایک اور چھوٹی بیٹی بھی نیشنل پلیئر ہیں اور اس وقت وہ ایران میں موجود ہیں جہاں وہ کھیلوں کے مقابلے میں پاکستان کی نمائندگی کر رہی ہیں جبکہ نقش ہمدانی پاکستان کی سب سے کم عمر پلیئر ہونے کا اعزاز رکھتی ہیں ۔

دوسری طرف نقش ہمدانی کا کہنا تھا کہ پاکستان تائیکوانڈو فیڈریشن نے مجھے مکمل سپورٹ کیا ہے ،اس سے قبل فیڈریشن مجھے ہندوستان میں بھی لے گئی تھی لیکن اب فیڈریشن کے پاس بھی اس عالمی ایونٹ میں شرکت کے لئے کوئی فنڈز ہی نہیں ہیں تاہم میں مایوس نہیں ہوں ،ہمارے ملک کے وزیر اعظم عمران خان خود ایک قومی ہیرو اور پاکستان کے سب سے کامیاب کھلاڑی رہے ہیں ،انہیں کھیلوں کے معاملات کا بخوبی ادراک ہے ،مجھے امید ہے کہ وزیر اعظم اور  کھیلوں کی سرپرستی کرنے والے پاکستان کے بڑے ادارے  ورلڈ تائیکوانڈو چیمپیئن شپ میں ان کی شرکت کے لئے نہ صرف سپانسر شپ کے لئے  آگے بڑھیں گے بلکہ تمام کھیلوں میں پاکستان کے ہونہار کھلاڑیوں کی سرپرستی بھی کی جائے گی تاکہ وہ عالمی سطح پر اپنے ملک کا نام روشن کر سکیں ۔پاکستان کی اس ہونہار اور با صلاحیت بیٹی کے سپانسر شپ یا دیگر معلومات  کے حوالے سے ان کے والد راحیل ہمدانی سے ان کے اس موبائل نمبر   03159290890  پر رابطہ کیا جا سکتا ہے ۔

مزید :

کھیل -