آسٹریا بھرمیں پیر کے روز سے سکولوں کے اوقات کار تبدیل ہوجائیں گے

آسٹریا بھرمیں پیر کے روز سے سکولوں کے اوقات کار تبدیل ہوجائیں گے
آسٹریا بھرمیں پیر کے روز سے سکولوں کے اوقات کار تبدیل ہوجائیں گے

  

ویانا(المیرباجوہ)آسٹریا کے سکول خود ٹائم ٹیبل تقسیم کرسکتے ہیں لیکن کچھ طلبہ کے لئے پہلا پلان لازمی ہوگا۔مقامی طلبا کے لئے ایک اور پلان آرہا ہے کیونکہ پیر سے وزیر تعلیم ہینز فیمن کے مطابق تیار کردہ اضافی معاون اوقات کارآمد ہوجائیں گے۔ خاص طور پر یہ پلان فاصلاتی تعلیم کے ذریعہ پیدا ہوئے ہیں۔ ہر طبقے کو دو اضافی گھنٹے ملنے چاہئیں اور اس طرح کلاس کو تقسیم کرنے یا چھوٹے گروپوں کو نافذ کرنے کے قابل ہوں گے بلکہ خاص طور پر سکول کے کام کے لئے ان کی مدد کرنے میں بھی اہل ہونگے۔

 سکول کتنے گھنٹے کھلتا ہے اس کا فیصلہ ایجوکیشن ڈائریکٹوریٹ کرئے گا۔ طلباکے پاس تھوڑا سا اپنا انتخاب بھی ہوگا جنہوں نے اضافی تعاون کے اوقات کی درخواست کی ہے ان میں شرکت کی ضرورت ہے۔ پڑھائی کی سپورٹ کے کل گھنٹوں کا دسواں حصہ ان گروہوں کے لئے مختص ہے جو جرمن زبان کو اچھی طرح سے بولتے نہیں ہیں، اس موضوع میں درجہ بندی کرنی ہوگی۔

 حالیہ دنوں میں مقامی سکولوں میں کورونا کے متعدد واقعات ہوئے اور میڈیا میں سرخیاں بھی لگی۔ آسٹریا کے نچلے حصے میں خود ٹیسٹوں کے ذریعے کلاسوں میں سے 174 کورونا مقدمات پہلے ہی تیار کیے جاچکے ہیں 115 طلبااور 59 اساتذہ متاثر ہوئے تھے اور ویانا میں متعدد سکولوں کو مشتبہ کورونا کی وجہ سے خالی کرنا پڑا۔ بدھ کے روز ایک ابتدائی سکول ہٹزنگ اور وہرنگر میں ایک اور سکول جمعرات کے روز کورونا وبا کی وجہ سے بند کرنا پڑا۔

مزید :

بین الاقوامی -