یکم مارچ: تعلیمی اداروں میں 50فیصد طلباء کی حاضری پالیسی برقرار رکھنے کا فیصلہ 

  یکم مارچ: تعلیمی اداروں میں 50فیصد طلباء کی حاضری پالیسی برقرار رکھنے کا ...

  

 ملتان (خصو صی  ر پو رٹر‘ جنرل رپورٹر) نشتر ہسپتال ملتان میں زیر علاج مزید 2 مریضوں میں کورونا کی تصدیق ہوگئی‘ کورونا کے زیر علاج مریضوں کی تعداد 12 ہو گئی تفصیل کے مطابق فوکل پرسن نشتر ہسپتال ڈاکٹر عرفان ارشد  نے بتایا کہ  نشتر ہسپتال کے آئی سو لیشن وارڈز میں یکم اپریل 2020  سے 25 فروری 2021 کے درمیان کورونا کے باعث ہونے والی اموات کی مجموعی تعداد 453  ہے، (بقیہ نمبر38صفحہ 6پر)

جبکہ نشتر ہسپتال میں گزشتہ چوبیس گھنٹوں کے دوران 02 مزید مریضوں میں کورونا کی تصدیق ہوئی ہے،یوں زیر علاج کورونا کہ مریضوں کی تعداد 12 ہو گئی ہے جن میں سے 09مریضوں کا تعلق ملتان سے ہے جبکہ زیر علاج  10مریضوں  کی حالت تشویشناک ہے اور 02مریض کا وینٹی لیٹر پر منتقل کر کے علاج جاری ہے،جبکہ کورونا کے شبہ میں 29 مریض زیر علاج ہیں جن کی رپورٹس کا انتظار  ہے،ادھر رواں سال نشتر ہسپتال میں کورونا کے شبہ میں 4 ہزار 340 افراد رپورٹ ہوئے جن میں سے 1 ہزار 558افراد میں کورونا کی تصدیق ہوئی‘ جبکہ ملتانسمیت صوبے کے سات اضلاع کے تعلیمی اداروں میں 50 فیصد طلباء کے کلاسز لینے کی پالیسی برقرار رکھنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ لاہور کے سکولوں میں 31 مارچ تک 50 فیصد طلباء کی کلاسز کی پالیسی لاگو رہے گی۔ ان سات اضلاع کے سکولوں میں یکم مارچ سے تمام طلباء کیلئے کلاسز کے انعقاد پر پاپندی ہوگی۔ ملتان، گجرات، رحیم یار خان، سیالکوٹ،لاہور راولپنڈی اور فیصل آباد ضلع میں پچاس فیصد طلباء کی پالیسی لاگو رہے گی۔ مذکورہ اضلاع میں  کورونا کیسز بڑھنے کے باعث سو فیصد طلباء کے کلاسز کی اجازت نہیں ہوگی۔محکمہ سکولز ایجوکیشن نے یکم مارچ سے لاگو ہونے والی پالیسی پر مبنی نوٹیفکیشن جاری کر دیا۔ محکمہ سکولز ایجوکیشن نے مذکورہ سات اضلاع میں پچاس فیصد طلباء کی پالیسی پر عمل درآمد کرانے کیلئے ڈسٹرکٹ ایجوکیشن اتھارٹیز کو ہدایات جاری کر دیں۔

کرونا

مزید :

ملتان صفحہ آخر -