ڈیرہ: جرائم پیشہ عناصر کیخلاف آپریشن‘ حکمت عملی فائنل‘ ذرائع 

ڈیرہ: جرائم پیشہ عناصر کیخلاف آپریشن‘ حکمت عملی فائنل‘ ذرائع 

  

ڈیرہ غازیخان(سٹی رپورٹر) آر پی او فیصل رانا نے ”ماڑی،،کی ترقی اور اسے سیاحتی مقام بنانے کے حکومتی منصوبے پر عمل در آمد کے لئے کمشنر کے ہمراہ دورہ کیا‘ جنوبی پنجاب میں خوف کی علامت،،مریدا نوکانی،،گینگ کی کمین گاہوں والے علاقوں کا بھی دورہ،راجن پور پولیس اور بی ایم پی کی مشترکہ کوششوں سے،،مریدا نوکانی،،اور،،لادی گینگ،،سمیت ہر قسم کے قانون شکن کے لئے نتیجہ خیز اور فیصلہ کن آپریشن کی حکمت عملی طے کر دی گئی،،(بقیہ نمبر31صفحہ 6پر)

تفصیلات کے مطابق وزیر اعلی پنجاب سردار عثمان بزدار نے،،ماڑی،،کو عالمی سطح کا صحت افزا سیاحتی مقام بنانے کا جو فیصلہ کیا ہے ان کے احکامات پر عمل در آمد کے لئے ریجنل پولیس آفیسر ڈی آئی جی محمد فیصل رانا نے کمشنر ڈی جی خان ڈاکٹر ارشاد احمد و دیگر کے ہمراہ ماڑی کا دورہ کیا آر پی او نے کہا کہ راجن پور پولیس اور بارڈر ملٹری پولیس مل کر یہاں پر آنے والے سیاحوں کو اس طرح کی سیکورٹی مہیا کرے گی کہ ملکی و غیر ملکی سیاح بلا خوف و خطر جوق در جوق یہاں پر سیاحت کے لئے آئیں گے،،انہوں نے اس علاقہ کا بھی دورہ کیا جو ماضی میں قانون شکنی کے حوالے سے جنوبی پنجاب میں دہشت اور خوف کی علامت سمجھے جانے والے،،مریدا نکانی،،گینگ کی خطرناکیوں کی وجہ سے نو گو ایریا بنا ہوا تھا آر پی او نے کہا کہ مریدا نکانی ہو یا لادی گینگ ہو پولیس اور قانون نافذ کرنے والے ادارے ہر قسم کے قانون شکن کے ساتھ قانون کی طاقت سے نمٹنے کے لئے تیار ہیں،وزیر اعلی پنجاب سردار عثمان بزدار نے پولیس کو قانون شکنوں کے خلاف قانونی آپریشن  کے لئے بے پناہ وسائل فراہم کر دئیے ہیں،ان جدید وسائل کو استعمال میں لا کر ہر قسم کے قانون شکن کے خلاف اب فیصلہ کن اور نتیجہ خیز آپریشن ہو گا جس کے لئے بی ایم۔پی اور پولیس کی مشترکہ حکمت عملی طے کر لی گئی ہے،آر پی او نے کہا کہ ڈی جی خان ریجن میں کوئی نو گو ایریا ہے نہ بننے دیا جائے گا،اس موقع پر آر پی او نے ان علاقوں میں قائم پولیس پوسٹوں کا دورہ بھی کیا اور وہاں پر تعینات اہلکاروں سے گھل مل گئے،اہلکاروں کے ساتھ مل کر آر پی او نے پاکستان  زندہ باد کے فلک شگاف نعرے بھی لگائے۔ جبکہ آر پی او فیصل رانا نے ناقص تفتیش اور کرپشن کی شکایات ثابت ہونے پر ایک سب انسپکٹر اور ایک اے ایس آئی کو ملازمت سے برخاست کر دیا،لالچ اور دباؤ کے تحت گناہگار کو بے گناہ اور بے گناہ کو گنہگار کرنے والوں کی محکمہ میں کوئی گنجائش نہیں،محکمہ میں انصاف ہی عوام کو انصاف کی فراہمی کا حقیقی ترازو ہے،ان خیالات کا اظہار ریجنل پولیس آفیسر ڈی آئی جی محمد فیصل رانا نے محکمانہ اردل روم کے دوران کیا، جس میں رولز کے عین مطابق محکمانہ انکوائریوں کی تکمیل کے بعد سب انسپکٹر عابد عزیز اور اے ایس آئی اختر کو ملازمت سے بر طرف کر دیاان پر کرپشن کرنے،ناقص تفتیش اور لاچ و دباؤ کے تحت گنہگار کو بے گناہ اور بے گناہ کو گنہگار کرنے کے الزامات درست ثابت ہوئے تھے،آر پی او فیصل رانا نے کہا کہ وزیر اعلی پنجاب سردار عثمان بزدار کے ویژن اور آئی جی پنجاب انعام غنی کی ہدایات کے مطابق جہاں پر قانون سب کے لئے یکساں کے فارمولے کے تحت عوام کو انصاف مہیا کرنے کا سلسلہ 24/7جاری ہے وہاں پر پولیس میں موجود کالی بھیڑوں کے خلاف بھی محکمانہ احتساب اور فرض شناس پولیس افسران و اہلکاروں کو شاباش اور انعامات و ایوارڈ سے نوازے جانے کا کام بھی یکساں جاری ہے،انہوں نے کہا کہ جس حد تک رولز میں اہلکاروں کو ریلیف دینے کے مواقع ہیں میں اس سے استفادہ کا مکمل موقع دیتا ہوں لیکن جب انہی رولز کے تحت کروائی جانے والی انکوائریاں اور پھر اس کے کاونٹر انکوائریاں ایک جیسے نتائج سامنے لاتی ہیں تو ان سزاؤں پر عمل کیا جاتا ہے جو محکمانہ رولز کے میں واضح کی گئی ہیں،آر پی او نے اپنے محکمانہ اردل روم میں 31 اپیلیں سنیں جن میں سے 9 خارج،5 پینڈنگ اور 17 منظور کر لی گئیں۔

فائنل

مزید :

ملتان صفحہ آخر -