’کورونا کے مریض سے وائرس منتقلی کا خطرہ صرف 10 فیصد ہوتا ہے‘ نئی تحقیق میں ایسا انکشاف کہ کورونا کا خوف ہی جاتا رہے

’کورونا کے مریض سے وائرس منتقلی کا خطرہ صرف 10 فیصد ہوتا ہے‘ نئی تحقیق میں ...
’کورونا کے مریض سے وائرس منتقلی کا خطرہ صرف 10 فیصد ہوتا ہے‘ نئی تحقیق میں ایسا انکشاف کہ کورونا کا خوف ہی جاتا رہے

  

نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک) کورونا وائرس کا خوف ایسا ہے کہ لوگ سمجھتے ہیں کہ اس سے متاثرہ شخص پاس سے بھی گزرا تو وائرس انہیں لاحق ہو جائے گاتاہم اب امریکی سائنسدانوں نے نئی تحقیق میں اس کے برعکس ایسا انکشاف کر ڈالا ہے کہ جان کر اس موذی وائرس کا خوف جاتا رہے گا۔

 میل آن لائن کے مطابق سائنسدانوں نے اپنی تحقیق میں بتایا ہے کہ اگر آپ کے گھر میں کسی کو کورونا وائرس لاحق ہو جائے تو اس سے آپ کو وائرس منتقل ہونے کا امکان صرف 10.1فیصد ہوتا ہے۔ 

میساچوسٹس جنرل ہسپتال کے سائنسدانوں نے اس تحقیق میں بوسٹن کے 7ہزار گھروں کے ڈیٹا کا تجزیہ کرکے نتائج مرتب کیے ہیں۔ 4مارچ سے 17مئی 2020ءکے درمیان ان 7ہزار گھروں میں 25ہزار لوگ رہائش پذیر رہے۔ ان میں سے 7ہزار 262لوگوں کو وائرس لاحق ہوا اور انہوں نے آگے صرف 1ہزار 809لوگوں کو وائرس منتقل کیا۔

نتائج میں سائنسدانوں نے بتایا کہ ایسے گھر جن میں تین سے پانچ لوگ رہتے تھے، وہاں مریض سے دوسروں کو وائرس منتقل ہونے کی شرح کم تھی۔ ایسے گھر جن میں صرف 2لوگ رہائش پذیر تھے وہاں دوسرے شخص کو وائرس منتقل ہونے کی شرح سب سے زیادہ 20فیصد پائی گئی۔ ان لوگوں میں سے بھی سب سے زیادہ انہیں وائرس منتقل ہوا جو کینسر کی بیماری کا شکار تھے۔ ان میں کینسر منتقل ہونے کی شرح 67فیصد پائی گئی۔ اس کے بعد موٹاپے کے شکار لوگوں میں 35فیصد اور دمے کے مریضوں میں سب سے زیادہ 31فیصد شرح رہی۔

مزید :

کورونا وائرس -