’لائیکس کیلئے بے چین لوگوں کی حالت ایسی ہوتی ہے جیسے خوراک کی تلاش میں بھوکے چوہے‘ سائنسدانوں نے نئی تحقیق میں دلچسپ انکشاف کردیا

’لائیکس کیلئے بے چین لوگوں کی حالت ایسی ہوتی ہے جیسے خوراک کی تلاش میں بھوکے ...
’لائیکس کیلئے بے چین لوگوں کی حالت ایسی ہوتی ہے جیسے خوراک کی تلاش میں بھوکے چوہے‘ سائنسدانوں نے نئی تحقیق میں دلچسپ انکشاف کردیا
سورس:   Pxhere (creative commons license)

  

نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک) یہ سوشل میڈیا کا دور ہے اور لوگوں میں ’لائیکس‘ کی گویاایک ہوس سی پیدا ہو چکی ہے تاہم اب سائنسدانوں نے لائیکس کے لیے ہلکان ہوئے لوگوں کے متعلق ایک ایسا انکشاف کر ڈالا ہے کہ سن کر خود ان لوگوں کے چہروں پر بھی مسکراہٹ پھیل جائے گی۔

 میل آن لائن کے مطابق امریکہ اور یورپ کے سائنسدانوں نے انسانوں اور چوہوں پر کی جانے والی اپنی اس مشترکہ تحقیق کے نتائج میں بتایا ہے کہ وہ سوشل میڈیا صارفین جو لائیکس کے لیے بے صبرے ہوئے جا رہے ہوتے ہیں ان کی ذہنی حالت ان چوہوں جیسی ہوتی ہے جو بھوک کے مارے خوراک کی تلاش میں سرگرداں ہوتے ہیں۔

سائنسدانوں نے اس تحقیق میں لوگوں اور چوہوں کی دماغی سرگرمیوں کی مانیٹرنگ کی، جس میں پتا چلا کہ جب کوئی سوشل میڈیا صارف اپنی پوسٹ پر لائیکس کے لیے اتاﺅلا ہورہا ہوتا ہے اور جب کوئی بھوکا چوہا خوراک کی تلاش کر رہا ہوتا ہے،ا س وقت ان دونوں کی سوچ کا انداز ایک جیسا ہوتا ہے۔ نیویارک یونیورسٹی کے ماہر نفسیات اور تحقیقاتی ٹیم کے رکن پروفیسر ڈیوڈ اموڈیو کا کہنا ہے کہ ”ہماری تحقیق میں یہ بات ثابت ہوئی ہے کہ انسان کی لائیکس حاصل کرنے کی خواہش ایک ایسی جبلت ہے جو لگ بھگ ہر جانور میں پائی جاتی ہے۔ اس جبلت کے تحت جانور زیادہ سے زیادہ خوراک وغیرہ حاصل کرنے کی خواہش اور کوشش کرتے ہیں۔“

مزید :

ڈیلی بائیٹس -