شادی کیلئے پیسے نہ ہونے کی وجہ سے بنا شادی ہی 24 سال تک سڑکوں پر رہنے والے غریب ترین جوڑے کی شادی کرادی گئی، فوٹو شوٹ دیکھ کر آپ کو بھی خوشی ہوگی

شادی کیلئے پیسے نہ ہونے کی وجہ سے بنا شادی ہی 24 سال تک سڑکوں پر رہنے والے غریب ...
شادی کیلئے پیسے نہ ہونے کی وجہ سے بنا شادی ہی 24 سال تک سڑکوں پر رہنے والے غریب ترین جوڑے کی شادی کرادی گئی، فوٹو شوٹ دیکھ کر آپ کو بھی خوشی ہوگی

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

منیلا(مانیٹرنگ ڈیسک) فلپائن میں ایک غریب بے گھر جوڑے کی شادی کا بالآخر 24سال بعد انتظام ہو گیا۔ ڈیلی سٹار کے مطابق 50سالہ روزلین فیریئر اور 55سالہ رومیل باسکو نامی یہ جوڑا گزشتہ 24سال سے اکٹھے رہ رہا ہے۔ یہ اڑھائی دہائیاں اس جوڑے نے سڑک پر بے سروسامانی کے عالم میں گزاری ہیں۔ ان کے پاس ایک سائیکل ہے جس کے ساتھ لگی چھوٹی سی ٹرالی میں ان کا بستر اور باقی کچھ سامان لدا رہتا ہے۔ 
رومیل اور روزلین کی شادی کا انتظام رچرڈ سٹرینڈز نامی ایک شخص نے کیا ہے جو ایک سیلون کا مالک ہے۔ اس کے سیلون کے ورکرز نے ہی رومیل اور روزلین کا میک اپ کیا، انہیں عروسی جوڑے پہنانے اور ان کا ایک گلیمرس فوٹوشوٹ کرایا۔ رچرڈ سٹرینڈز کا کہنا ہے کہ اس وقت کورونا وائرس کی وجہ سے شادی کی تقریب کا انعقاد ممکنہ نہیں چنانچہ 2021ءمیں ہی کسی وقت جب پابندیاں کچھ نرم ہوئیں، روزلین اور رومیل کی شادی دھوم دھام سے کرائی جائے گی۔ اس فوٹوشوٹ کے بعد روزلین کا کہنا تھا کہ ”جب میں چھوٹی سی لڑکی ہوا کرتی تھی، تب سے میں سفید عروسی جوڑا پہننے کے خواب دیکھتی آ رہی ہوں تاہم میرے ان خوابوں کو اب جا کر تعبیر ملی ہے۔ تمام عمر میں اور رومیل دو وقت کے کھانے کے لیے ہی تگ و دو کرتے رہے اور اب میری دلہن بننے کی امید ہی دم توڑ چکی تھی کہ رچرڈ نے میری زندگی کی یہ سب سے بڑی خواہش پوری کر دی ہے۔“

مزید :

ڈیلی بائیٹس -