جیلیں بھرنے کے دعویدار سیلفیاں بنا رہے ہیں،عظمیٰ بخاری

    جیلیں بھرنے کے دعویدار سیلفیاں بنا رہے ہیں،عظمیٰ بخاری

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


لاہور(جنرل رپورٹر)مسلم لیگ ن کی رہنما عظمی بخاری نے کہا ہے کہ تحریک انصاف کی جیل بھرو تحریک ڈوب مرو اور شرم کرو تحریک میں تبدیل ہو چکی ہیں ملک کی جیلیں بھرنے کے دعوے دار سیلفیاں بنانے تک محدود ہے۔پارٹی کے صدر کا عہدہ لینے والے پرویز الٰہی کو جیل سے اسد عمر کی خواہش کا بھی احترام کرتے ہوئے گرفتاری دینی چاہیے۔ماڈل ٹاؤن پارٹی سیکرٹریٹ میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے مسلم لیگ ن کی رہنما عظمی بخاری نے تحریک انصاف سینٹرل پنجاب کی صدر ڈاکٹر یاسمین راشد پر لفظی وار کرتے ہوئے کہا ڈاکٹر صاحبہ بد زبان ہونے کی بجائے اپنی عمر کا لحاظ رکھیں۔مریم نواز پر تنقید کرنے کی بجائے کرونا میں کھائے گئے کروڑوں کے فنڈز کا جواب دیں۔ عمران خان کی آڈیو لیک کے بعد تو پی ٹی آئی خواتین کو بات کرنا تو دور منہ چھپانا چاہیے۔  عظمی بخاری نے کہا شاہ محمود قریشی کی گرفتاری کے دوسرے روز ہی زین قریشی کو ابو بچانے کی پڑ گئی۔

جیل جانے سے پہلے منڈیلا بنتے ہے اور جیل جا کر رنڈیلا بن جاتے ہیں۔نئے رہنما مونس الہیٰ بھی ذرا باہر سے آئے اور گرفتاری دیں،تحریک انصاف ایک بدتمیز جماعت ہے،ان کی گالم گلوچ سے کوئی بچ نہیں سکتا،چند ایسے چہرے جن کو ٹھیک سمجھا جاتا،یاسمین راشد اب فردوس عاشق اعوان بننے کی کوشش کررہی ہیں،یا وہ خواتین کی شہباز گل بننا چاہ رہی ہیں،یاسمین راشد کی بدتمیزی ان کا عنصر بن گئی ہے،یاسمین راشد کا تکبر عروج پر ہے،یا سیمین راشد کو مریم نواز دو مرتبہ دھول چٹا چکی ہیں،یاسمین راشد اپنے قد کے مطابق گفتگو کیا کریں،کہتی ہیں مریم نواز میرے ساتھ آکر بیٹھے بی بی آپ ہیں کون؟مریم نواز آپ کے لیڈر کے ساتھ بیٹھنے کے لئے تیار نہیں ہیں۔یاسمین راشد اپنے گریبان میں جھانک کر دیکھیں۔آپ کا لیڈر گندگی اور غلاظت سے بھرا ہوا ہے،آپ کا اپنا لیڈر تھرڈ ڈگری پر آکسفورڈ سے ہوکر آیا،یاسمین راشد کے بارے میں مشہور تھا کہ قصائی تھی ڈاکٹر نہیں۔یاسمین راشد کا رنگ لوگوں نے دیکھ لیا ہے۔عزت کروانے سے ہوتی ہے زبردستی نہیں ہوسکتی،آپ نے کورونا فنڈز میں ڈکیتیاں کی۔کورونا فنڈز سے یاسمین راشد نے عثمان بزدار کا ہیلی ہیڈ بنوایا،یاسمین راشد ایک مردہ خانہ نہیں بنوا سکی ملتان میں نشتر ہسپتال سے لاشیں کھائی ملی،انھوں نے پنجاب میں مفت ادویات بند کروادیں،ینگ ڈاکٹرز کی فوج شہباز شریف کے لئے بنوائی گئی لیکن انھوں نے یاسمین راشد کو دھکے مار کر نکالا۔دوسروں پر بات کرنے سے پہلے اپنے لیڈر کو دیکھ لیا کریں،آئے عمران خان کی عدت والی شادی پر بات کرتے ہیں،آئے کرتے ہیں ٹیریان وائیٹ پر کرتے ہیں بات۔آپ کو جواب آئے گا آپ کی زبان اور آپ کے لہجہ(ٹون) میں آئے گا۔سمجھ نہیں آتی ان کے پر دفتر میں نشئی کیوں بیٹھتے ہیں۔یاسمین راشد کی گاڑی پر دو ڈنڈے پڑ گئے تھے پوری قوم پر عذاب آگیا تھا،ان کی جیل بھرو تحریک ڈوب مرو شرم کرو تحریک بن چکی ہے۔اوقات یہ ہے کہ ان کے لوگ آتے ہیں اور سیلفی کھینچ کر واپس چلے جاتے ہیں۔ہمیں اٹھا اٹھا کر جیل پھینکا جاتا تھا ان کو کیوں نہیں پکڑا جاتا۔ جو بچے جیل میں گئے ہیں ان کے لواحقین زمان پارک میں بیٹھے ہوئے ہیں۔ملک کے مسائل کیا ہیں ان لوگوں کا اس سے کچھ لینا دینا نہیں ہے۔اسد عمر نے جیل سے بیٹھ کر فرمائش کی ہے کہ پرویز الہی کو بھی جیل بھیجیں۔مونس الہی واپس آؤ جیل جاؤ باہر کیوں بیٹھے ہوئے ہو۔