جیل بھرو تحریک ناکامی سے دو چار ہو گئی‘ ارباب فاروق

جیل بھرو تحریک ناکامی سے دو چار ہو گئی‘ ارباب فاروق

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


پشاور(سٹی رپورٹر) جمعیت علمائے اسلام کے صوبائی رہنماء و سابق امیدوار صوبائی اسمبلی ارباب فاروق جان نے کہا ہے کہ پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان کی کال پر ملک بھر میں جاری جیل بھرو تحریک ناکامی سے دو چار ہو گیا ہے جو صرف اور صرف فوٹو سیشن اور سیلفیوں تک محدود ہونے سمیت صوبے میں کسی بھی گرفتاری نہیں دی حالانکہ صوبہ خیبر پختونخوا کی پولیس گلی گلی اور کوچوں میں گرفتاریوں کیلئے اعلانات کرتی رہی۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے لنڈی ارباب ٹانگو اڈہ میں کارنر میٹنگ سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ ارباب فاروق جان نے کہا کہ پاکستان تحریک انصاف کے جن چند رہنماؤں نے گرفتاریاں دی ہیں وہ اور ان کے رشتہ دار اب رہائی کیلئے درخواستیں جمع کروا رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ جیل بھرو تحریک ان سیاسی نا بالغوں کا کام نہیں ہے وہ ایک سیاسی وژن رکھنے والے لوگ ہوتے ہیں جو حقیقی معنوں میں گرفتاریاں دے کر قید و بند کی صعوبتیں برداشت کرتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ صوبہ خیبر پختونخوا کے سابقہ ممبران صوبائی اسمبلی و ایم این ایز پولیس وین دیکھ کر بھاگتے رہے جبکہ بعض پولیس کی منت سماجت کرتے دکھائی دیئے جس سے ملک بھر میں ان کی جگ ہنسائی ہوئی۔ انہوں نے کہا کہ سازش کے تحت آنے والوں نے ملک کے خلاف سازشوں کا سلسلہ شروع کردیا ہے آئے روز چیئرمین پی ٹی آئی کی جانب سے اپنی ہی باتوں سے یوٹرن لینا سیاسی نا بالغی کا ثبوت ہے۔ انہوں نے کہا کہ عوام جان گئے ہیں کہ پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان کے قول اور فعل میں تضاد ہے اور وہ صرف الزامات کی سیاست کرتے ہیں جبکہ انہیں ملک و قوم کی کوئی فکر نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ آئندہ عام انتخابات میں چیئرمین پی ٹی آئی کو ناکامی کے سواء کچھ نہیں ملے گا کیونکہ انہوں نے مرکز میں چار سالہ دور اقتدار اور صوبے میں نو سالہ دور اقتدار میں عوام کیلئے کچھ نہیں کیا ہے۔