مخصوص نشستوں پر صرف الیکشن لڑنے والی جماعتوں کا حق ہے، اعظم نذیر تارڑ

مخصوص نشستوں پر صرف الیکشن لڑنے والی جماعتوں کا حق ہے، اعظم نذیر تارڑ
مخصوص نشستوں پر صرف الیکشن لڑنے والی جماعتوں کا حق ہے، اعظم نذیر تارڑ

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن) پاکستان مسلم لیگ ن کے رہنماؤں نے کہا ہے کہ اسمبلیوں میں مخصوص نشستیں صرف ان جماعتوں کے لیے ہوتی ہیں جنہوں نے الیکشن جیتا ہو، سنی اتحاد کونسل کو عوام نے الیکشن میں مسترد کر دیا، اس نے کوئی نشست نہیں جیتی۔

نجی ٹی وی چینل دنیا نیوز کے مطابق الیکشن کمیشن میں سماعت کے بعد پریس کانفرنس کرتے ہوئے مسلم لیگ (ن) کے رہنما اور سابق وزیر قانون اعظم نذیر تارڑ نے کہا ہے کہ سنی اتحاد کونسل کی نشستیں نہیں بنتی، یہ نشستیں ن لیگ کو دی جائیں۔

انہوں نے کہا ہے کہ الیکشن کمیشن میں سیاسی جماعتوں کے امیدواروں نے درخواستیں دائر کی تھیں، الیکشن کمیشن نے ایم کیو ایم، پیپلز پارٹی اور ن لیگ کی درخواستیں یکجا کر دیں، شور مچایا جارہا ہے کہ الیکشن کمیشن فیصلہ نہیں کرتا، سنی اتحاد کونسل نے درخواستوں میں فریق نہیں بنایا، مخصوص نشستوں پر قانونی پوزیشن واضح ہے، سنی اتحاد کونسل کو ایک بھی سیٹ نہیں ملی۔

سابق وزیر قانون اعظم نذیر تارڑ نے مزید کہا ہے کہ جو جماعت جیت کر آئی انہیں مخصوص نشستیں ملیں گی۔

اس موقع پر ن لیگی رہنما عطا تارڑ نے کہا کہ پی ٹی آئی نے بغیر سوچے سمجھے سنی اتحاد کونسل کو جوائن کیا، ہمیشہ کی طرح پی ٹی آئی آئین کی پامالی کی کوشش کر رہی ہے، سنی اتحاد کے سربراہ نے اپنی ہی پارٹی کے نشان پر الیکشن نہیں لڑا۔

عطا تارڑ کا مزید کہنا تھا کہ پارلیمان میں موجود جماعتوں کو مخصوص نشستیں دی جائیں، زور زبردستی کر کے نشستیں لیںے میں کامیاب نہیں ہوسکتے۔