ہائیکورٹ ،قتل میں ملوث سابق انسپکٹرکی ضمانت منسوخ،موقع پر گرفتار

ہائیکورٹ ،قتل میں ملوث سابق انسپکٹرکی ضمانت منسوخ،موقع پر گرفتار

  

 لاہور(نامہ نگار خصوصی )لاہور ہائیکورٹ نے جعلی پولیس مقابلے میں شہری کو قتل کرنے والے سابق پولیس انسپکٹر کی جانب سے دائرضمانت کی درخواست خارج کردی جس کے بعد متعلقہ پولیس نے اسے گرفتار کرلیا۔مسٹر جسٹس منظور احمد ملک نے سابق پولیس انسپکٹر رستم علی کی درخواست پر سماعت کی، درخواست گزار نے موقف اختیار کیا کہ شہری یونس کو قتل نہیں کیا گیا بلکہ وہ اصلی پولیس مقابلے میں مارا گیا ہے لہذا درخواست گزار کے خلاف درج مقدمہ خارج کیا جائے اور اسے ضمانت پر رہا کرنے کا حکم دیا جائے، آئی جی بلوچستان محمد عملیش بھی عدالت میں پیش ہوئے، انہوں نے عدالت کو بتایا کہ بطور ڈی آئی جی انویسٹی گیشن پنجاب انہوں نے اس وقوعہ کی انکوائری کی تھی جس میں انہوں نے سابق پولیس انسپکٹر کو تفتیش میں گنہگار ٹھہرایا تھا، پراسیکیوشن کی طرف سے عدالت کو بتایا گیا کہ ملزم 4برسوں سے اشتہار ی ہے، عدالت نے عبوری ضمانت کی درخواست خارج کر دی جس کے بعد متعلقہ پولیس نے ملزم کو احاطہ عدالت سے گرفتار کر لیا۔ ضمانت منسوخ

مزید :

صفحہ آخر -