بااثر افراد کا محنت کش پر تشدد ،مو ٹر سائیکل اور نقدی چھین لی

بااثر افراد کا محنت کش پر تشدد ،مو ٹر سائیکل اور نقدی چھین لی
 بااثر افراد کا محنت کش پر تشدد ،مو ٹر سائیکل اور نقدی چھین لی

  


 لاہور(کر ائم سیل)تھانہ فیکٹری ایریا کے علا قہ میں بااثر افراد کا محنت کش پر تشدد ،مو ٹر سائیکل اور نقدی چھین لی۔تفتیشی افسر اے ایس آئی افصل ڈھلو انصاف کی فراہمی میں رکاوٹ بن گیا۔متاثرہ شخص نے عدالت سے رجوع کیا تو تفتیشی عدالت کے رپورٹ طلب کر نے پر بھی ملزمان سے ساز باز کر کے حیلے بہانوں سے عدالت میں رپورٹ پیش کر نے میں دیر کر نے لگا۔تفصیلا ت کے مطابق فیکٹری ایریاکے علاقہ نظام پورہ ڈھاکہ کے رہا ئشی افضل سندھو نے روز نامہ’’پاکستان‘‘ سے گفتگو کرتے ہو ئے کہا کہ میں محنت مزدری کرتا ہوں اور میں نے بسم اللہ لکی کمیٹی سے6ماہ قبل گاؤں کے رہا ئشی شاہد عباس سے قسطوں پر مو ٹر سائیکل لی تھی ۔میں مو ٹر سائیکل کی اقساط ادا کرنے کے بعد اپنی مو ٹر سائیکل کے کا غذات اور ضمانت کا چیک وغیرہ لینے کے لیے شاہد عبا س کے پاس گیا توملزمان برا مان گئے۔میرے اصرار پر مجھے تشدد کا نشانہ بنایا اور مجھ سے میری موٹر سائیکل اور 20ہزار نقدی چھین لی ۔ میں نے انصاف کے حصول کے لیے تھانہ فیکٹری ایریا میں درخواست دی لیکن تفتیشی افسر اے ایس آئی افضل ڈھلو نے میری بات سننے کی بجا ئے ملزم پارٹی کے ساتھ ساز باز کر کے مجھے ذلیل کر نا شرع کر دیا ۔جب ایک ماہ کے بعد بھی میرا مقدمہ درج نہ ہو سکا تو میں نے عدالت سے رجوع کیا، جب عدالت نے پولیس کو رپورٹ پیش کرنے کا حکم دیا تو تفتیشی کی پھر چاندی ہو گئی۔ اس نے نئے سر سے ملزمان سے ساز باز کیا اور مجھے دو دفعہ تھانے میں انویسٹی گیشن کر نے کے لیے بلا یا لیکن ملزمان پیش نہ ہوئے ۔تفتیشی نے عدالت میں رپورٹ پیش کر نے کے لیے مزید ٹائم مانگ لیا ۔تفتیشی میرے ساتھ زیادتی کر رہا ہے اعلیٰ حکام انصاف دلا ئیں۔

مزید : علاقائی


loading...