اگر پیٹ کی چربی فوری پگھلانا چاہتے ہیں تو صبح نہاتے ہوئے یہ ایک کام ضرور کریں، جدید تحقیق میں سائنسدانوں نے بہترین نسخہ بتادیا

اگر پیٹ کی چربی فوری پگھلانا چاہتے ہیں تو صبح نہاتے ہوئے یہ ایک کام ضرور ...
اگر پیٹ کی چربی فوری پگھلانا چاہتے ہیں تو صبح نہاتے ہوئے یہ ایک کام ضرور کریں، جدید تحقیق میں سائنسدانوں نے بہترین نسخہ بتادیا

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

لندن (نیوز ڈیسک) سردی کے موسم میں صبح سویرے ٹھنڈے پانی سے نہانے کا تصور کر کے اکثر لوگ کانپ اٹھیں گے، لیکن اگر ان لوگوں کو ٹھنڈے پانی سے غسل کے فوائد کا علم ہو جائے تو یہ دوبارہ کبھی گرم پانی سے نہانے پر تیار نہیں ہوں گے۔

ڈیلی میل کی ایک رپورٹ میں انکشاف کیا گیا ہے کہ سائنسدانوں نے متعدد تحقیقات کے نتائج کا جائزہ لینے کے بعد مجموعی طور پر یہ نتیجہ اخذ کیا ہے کہ صبح سویرے ٹھنڈے پانی سے نہانا پیٹ کے گرد جمع چربی کو اتنی تیزی سے پگھلاتاہے کہ انسان واقعی حیران رہ جائے، جبکہ چمکدار بال اور تروتازہ جلد و متعدد بیماریوں سے بچاﺅ اضافی فوائد ہیں۔

رپورٹ کے مطابق حال ہی میں تین ہزار افراد پر کی گئی ایک تحقیق میں یہ بھی معلوم ہوا کہ ٹھنڈے پانی کے ساتھ نہانے والے افراد ناصرف کم بیمار پڑتے ہیں بلکہ دن بھر زیادہ چست و توانا بھی رہتے تھے۔ تحقیق کاروں کا کہنا ہے کہ صبح سویرے ٹھنڈے پانی سے نہانا صرف آپ کو پوری طرح جگاتا ہی نہیں ہے بلکہ نفسیات دان ملنڈا نیسی کی تحقیق کے مطابق یہ آپ کے دماغ کی استعدادکار میں بھی اضافہ کرتا ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ جب ٹھنڈا پانی جسم پرپڑتا ہے تو ہم گہری سانسیں لیتے ہیں اور تمام اعضاءکی جانب دوران خون تیزی سے بڑھتا ہے۔ اس عمل میں دماغ کو بھی توانائی کا جھٹکا لگتا ہے جس کا اثر سارادن برقرار رہتا ہے۔

سردیوں میں آپ کا وزن تیزی سے کیوں بڑھتا ہے؟ بالآخر وجہ سامنے آگئی، معمہ حل ہوگیا

جب ہم اپنی ضرورت سے زیادہ حراروں پر مشتمل غذا کھاتے ہیں تو یہ ہمارے جسم میں چربی کی صورت میں جمع ہونے لگتی ہے۔ یہ موٹاپا پیدا کرنے والی چربی ہوتی ہے جبکہ اس کے برعکس ہمارے جسم میں براﺅن چربی بھی ہوتی ہے جو ہمیں توانائی دیتی ہے اور ہمارے دل و دماغ کو متحرک رکھتی ہے۔ صبح سویرے ٹھنڈے پانی سے نہانے سے نہ صرف موٹاپا پیدا کرنے والی چربی میں کمی آتی ہے بلکہ اس کی قابل ذکر مقدار براﺅن چربی میں تبدیل ہوجاتی ہے، جو کہ موٹاپے میں کمی اور توانائی میں اضافے کا سبب بنتا ہے۔

یونیورسٹی آف ماسٹرکٹ نیدر لینڈز کی تحقیق کے مطابق ٹھنڈے پانی سے نہانے والے بغیر کسی ورزش یا خوراک میں کمی کے ایک سال میں تقریباً پانچ کلوگرام وزن کم کرسکتے ہیں۔ بی ایم آئی ہینڈن ہسپتال سے وابستہ ڈاکٹر کولن کروسبی کہتے ہیں کہ جب آپ صبح سویرے ٹھنڈا پانی جسم پر ڈالتے ہیں تو پیریفرل سرکولیشن عارضی طور پر بند ہوجاتی ہے جبکہ جسم کے اہم اعضاءکو خون کی بھرپور فراہمی شروع ہوجاتی ہے۔ جب آپ نہا کر فارغ ہوتے ہیں تو ایک بار پھر پیریفرل سرکولیشن کا آغاز ہوتا ہے اور اس عمل کے دوران جسم کے اندرونی حصوں سے بیرونی حصوں کی جانب خون کو بہاﺅ شروع ہوتا ہے۔ اس عمل سے جسم کے متاثرہ خلیات کی قدرتی تعمیر و مرمت شروع ہوتی ہے جو ہماری عمومی صحت میں بڑی حد تک معاون ثابت ہوتی ہے۔ اس عمل سے ہمارا مدافعتی نظام بھی مضبوط ہوجاتا ہے اور ہم متعدد اقسام کی بیماریوں سے بچ سکتے ہیں۔

وہ غذا جسے کھاکر آپ سمجھتے ہیں کہ موٹاپاکم ہوگالیکن یہ وزن بڑھارہی ہے، سائنسدانوں نے حیران کن انکشاف کردیا

اسی طرح لیڈز ٹرینٹی یونیورسٹی کے سائنسدان ڈاکٹر جیمز جیکسن بتاتے ہیں کہ جب ٹھنڈا پانی آپ کے جسم پر پڑتا ہے تو جسم کا صدمہ خیز ردعمل دماغ کو اینڈورفن ہارمون خارج کرنے پر مجبور کرتا ہے۔ یہی وجہ ہے کہ ٹھنڈے پانی سے نہانا ذہنی دباﺅ سے نجات کا بہترین نسخہ ہے۔ ٹھنڈا پانی بالوں اور جلد کو تروتازگی بھی دیتا ہے۔ اس کی بنیادی وجہ جلد اور بالوں کی باہری سطح پر درجہ حرارت کی اچانک کمی ہے۔ بیرونی سطح پر اس تبدیلی کے نتیجے میں ناصرف خشکی کا خاتمہ ہوتا ہے بلکہ جلد اور بالوں کی تازگی اور چمک میں اضافہ ہوتا ہے۔

مزید : تعلیم و صحت