ہماری ثقافتی اور میڈیا پالیسی کی پہلی ترجیح حب الوطنی ہونی چاہئے، بہار بیگم

ہماری ثقافتی اور میڈیا پالیسی کی پہلی ترجیح حب الوطنی ہونی چاہئے، بہار بیگم

لاہور(فلم رپورٹر )یونیورسٹی آف سنٹرل پنجاب کے شعبہ سکول آف میڈیا کمیونیکیشن سٹڈیز کے زیر اہتمام سیمینار ’’پاکستان میڈیا پالیسی اور فارن کونٹینٹ‘‘ کا انعقاد ہوا۔ مہمان خصوصی فلمسٹار بہار بیگم‘ ہدایتکار شہزاد رفیق‘ عائشہ وٹو‘ جنرل منیجر پیمرا لاہور‘ سینئر صحافی خالد ابراہیم اور ڈین سی پی یونیورسٹی ڈاکٹر مغیث الدین شیخ شامل تھے۔ مقررین نے میڈیا پالیسی اور بیرون ممالک مواد کے حوالے سے اظہار خیال کرتے ہوئے کہا کہ ہماری ثقافتی اور میڈیا پالیسی میں پہلی ترجیح حب الوطنی اور قومیت پر مبنی موادکاہونا ضروری ہے۔ بہار بیگم نے کہا کہ ہمیں نئی نسل کو ایسی فلموں اور ٹی وی ڈراموں سے متعارف کرانا چاہئے جو اخلاقی اور معاشرتی روایات کے عکاس ہوں۔ ہدایتکار شہزاد رفیق نے کہاکہ بیرونی موادکے مخالف نہیں مگر اس مواد کو دوسری ترجیح دینا چاہئے۔ سینئر صحافی خالد ابراہیم نے کہا کہ ہماری اپنی ثقافت بہت وسیع ہے۔ پرنٹ و الیکٹرانک میڈیاکو ثقافتی سرگرمیوں کو فروغ دینے میں اہم کردار اداکرنا چاہئے۔یونیورسٹی ڈین ڈاکٹر مغیث الدین شیخ نے کہاکہ ہمارا اپنا ٹیلنٹ بہت باصلاحیت ہے۔

، ہماری فلم انڈسٹری اور ڈرامے کے حوالے سے سرکار ی طرف سے سرپرستی کی ضرورت ہے جبکہ ہمیں اپنی میڈیا پالیسی میں موجود حدود کا تعین بھی کرنا چاہئے۔ انہوں نے کہا کہ ہم نے یونیورسٹی میں فلم اور آرٹ کے حوالے سے خصوصی کلاسز کا آغاز کر رکھا ہے اور ہم تعلیم یافتہ ہنر مند‘ رائٹر‘ ڈائریکٹرز کی نئی کھیپ تیار کر رہے ہیں۔ سیمینار کی میزبانی احمد شیخ‘ آمنہ چوہدری اور علی طاہر مغیث نے کی جبکہ اختتام پر مہمانوں کوسوینئر دیئے گئے۔

مزید : کلچر