یوتھ فورم فار کشمیرکی بھارت کے یوم جمہوریہ کے موقع پرکشمیریوں سے اظہار یکجہتی

یوتھ فورم فار کشمیرکی بھارت کے یوم جمہوریہ کے موقع پرکشمیریوں سے اظہار ...

لاہور (پ ر )یوتھ فورم فار کشمیر لاہورکے زیر اہتمام بھارت کے یوم جمہوریہ کے موقع پرکشمیریوں سے اظہار یکجہتی کیلئے پنجاب اسمبلی سے لاہور پریس تک یوم سیاہ ریلی نکالی گئی جسکی قیادت چیف آرگنائزر طارق احسان غوری نے کی ،شدید بارش کے باوجود ریلی میں نوجوانوں کی کثیر تعداد نے شرکت کی فضا "کشمیر بنے گا پاکستان ،کشمیر پاکستان کی شہہ رگ ہے ،یوم جمہوریہ ڈھونگ ہے" کے فلگ شگاف نعروں سے گونجتی رہی۔طارق احسان غوری نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ آج بھارت کے یوم جمہوریہ کے موقع پر دنیا بھر میں مقیم کشمیری یوم سیاہ منا رہے ہیں جس کا مقصد کشمیری عوام کے جمہوری حق کو طاقت کے زور پر دبائے رکھنے پر عالمی برادری کو اپنا احتجاج ریکارڈ کرانا ہے۔

26 جنوری 1950 میں برطانوی راج سے آزادی کے بعد بھارت نے آئین ہند کو حتمی شکل دی۔ یوں ہندوستان دنیا کے نقشے پر پہلی مرتبہ جمہوری ملک کے طور پر سامنے آیا۔ اس دن کو بھارت میں سرکاری سطح پر یوم جمہوریہ کے طور پر منایا جاتا ہے جبکہ مقبوضہ جموں کشمیر کے عوام اور پوری دنیا میں مقیم کشمیری اسے یوم سیاہ کے طور پر مناتے ہیں۔ بھارت ایک طرف تو جمہوریت کا دعوی کرتا ہے لیکن دوسری جانب گزشتہ 6 دہائیوں سے کشمیری عوام کے ان کا بنیادی حق یعنی حق خود ارادیت دینے کے متعلق عالمی برادری سے اپنے ہی کیے ہوئے وعدوں سے مسلسل انکار کرتا آرہا ہے۔ بھارت نے لاکھوں کشمیریوں کو صرف اس لیے شہید کیا کہ وہ اپنے سیاسی مستقبل کا فیصلہ خود کرنا چاہتے ہیں۔ نئی دہلی کے حکمران جمہوریت کی آڑ میں حق خود ارادیت مانگنے کی پاداش میں کشمیری عوام پر ظلم کے پہاڑ توڑ رہے ہیں بھارت کا ایسا طرز عمل دراصل جمہوری اقدار کی نفی کرتا ہے۔

مزید : میٹروپولیٹن 4