عدالتی حکم کے باوجود پیش نہ ہونے پر50پولیس اہلکاروں کے وارنٹ گرفتاری جاری

عدالتی حکم کے باوجود پیش نہ ہونے پر50پولیس اہلکاروں کے وارنٹ گرفتاری جاری

لاہور(نامہ نگار )سیشن کورٹ میں منشیات کے 6مقدمات، ججزنے عدالتی حکم کے باوجود پیش نہ ہونے پر50پولیس اہلکاروں کے وارنٹ گرفتاری جاری کردیئے ہیں جبکہ 100کے قریب منشیات کے کیسزمیں ملزموں کے مفرور ہونے پر داخل دفتر کرنے کے احکامات جاری کردیئے ہیں، عدالت کی جانب سے سی سی پی اوکو مراسلہ بھی ارسال کیا گیاہے جس میں ہدایت کی گئی ہے کہ پولیس اہلکاروں کو عدالتوں میں پیش ہونے کا پابند کریں تاکہ التوا کے شکار کیسوں کو نمٹایا جائے۔سیشن کورٹ میں منشیات کی 6عدالتیں کام کررہی ہیں جن میں پولیس کی طرف سے درج منشیات کے مقدمات کے چالان بھجوائے جاتے ہیں ۔عدالت میں پیش کئے جانے والے چالانوں میں زیادہ تعداد پولیس کے گواہوں کی ہے۔

،دوران سماعت پولیس کے اہلکار عدالت میں پیش نہیں ہوتے جس کی وجہ سے سیکڑوں مقدمات التوا میں پڑے رہتے ہیں۔منشیات کی عدالتوں نے ملزمان کے بار بار طلبی کے پیش نہ ہونے پر 50پولیس اہلکاروں کے وارنٹ گرفتاری جاری کردیئے ہیں ۔مذکورہ عدالتوں کے ججزنے 100 ملزمان کوضمانتوں کے بعدمفرورہونے پران کے کیس ان کی گرفتاری تک داخل دفترکردیئے ہیں جبکہ پولیس کوحکم دیاہے کہ ان مفرور ملزمان کو فوری طورپرگرفتار کیا جائے۔

مزید : میٹروپولیٹن 4

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...